وزیراعلی شہباز شریف فارماسیو ٹیکل انڈسٹری کے مسائل کا نوٹس لیں : لاہور چیمبر

وزیراعلی شہباز شریف فارماسیو ٹیکل انڈسٹری کے مسائل کا نوٹس لیں : لاہور چیمبر

لاہور(کامرس رپورٹر) لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر عبدالباسط، سینئر نائب صدر امجد علی جاوا اور نائب صدر ناصر حمید خان نے وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف پر زور دیا ہے کہ وہ فارماسیوٹیکل انڈسٹری کی مشکلات کا نوٹس لیں اور اسے درپیش مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کے احکامات صادر کریں۔ لاہور چیمبر کے عہدیداروں نے کہا کہ پنجاب حکومت نے پنجاب ڈرگ ایکٹ 2017ء میں ترامیم کی تھیں جن کے خلاف ماہ فروری میں فارماسیوٹیکل انڈسٹری کے لوگوں نے احتجاج کیا، بدقسمتی سے اس ریلی میں دہشت گردی کا واقعہ رونما ہوا جس میں دو سینئر افسران سمیت 14لوگ شہید ہوگئے، اس سانحے کے بعد پنجاب حکومت نے پنجاب ڈرگ ایکٹ 2017ء میں کی جانے والی ترامیم پر عمل درآمد روک دیااور اس سلسلے میں حکومتی نمائندوں کے ساتھ میٹنگز جاری تھیں جبکہ صوبائی وزیر رانا ثناء اللہ نے بھی وعدہ کیا تھا کہ نئی ترامیم کے بعد مسودہ پنجاب اسمبلی کو منظوری کے لیے بھجوایا جائے گا کہ اچانک ڈرگ ایکٹ 2017میں کی جانے والی متنازعہ ترامیم پر عمل درآمد شروع کردیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ای اینڈ وائی نامی کمپنی نے انسپکشن کے لیے ایک ٹیم فارماسیوٹیکل یونٹ بھجوائی جس پر فارماسیوٹیکل انڈسٹری تشویش میں مبتلا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس کمپنی نے مقامی افراد کو بھرتی کیا ہے جن کا تجربہ بہت کم ہے مگر وہ اْن صنعتکاروں سے سوال کررہے ہیں جنہیں دہائیوں کا تجربہ ہے۔

لاہور چیمبر کے عہدیداروں نے کہا کہ اس قسم کے فیصلوں سے قبل ڈرگ ایکٹ ریگولیٹرز سٹیک ہولڈرز کو اعتماد میں لیں، اگر ایسے ایکشن جاری رکھے گئے تو ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن اور دیگر متعلقہ عالمی ادارے پاکستان سے متعلق رائے تبدیل کرلیں گے جس سے پاکستانی معیشت کو بھاری نقصان ہوگا۔ لاہور چیمبر کے عہدیداروں نے وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف پر زور دیا کہ وہ اس معاملے کا نوٹس لیں اور فارماسیوٹیکل انڈسٹری کا مسئلہ فورا حل کرنے کے احکامات صادر کریں۔

مزید : کامرس