مانگا منڈی، باثر افراد نے بیوہ خاتون کے گھر کاراستہ بند کر دیا

مانگا منڈی، باثر افراد نے بیوہ خاتون کے گھر کاراستہ بند کر دیا

مانگا منڈی (نمائندہ خصوصی)مانگا منڈی کے علاقہ میں بیوہ خاتون کے گھر کو جانے والا راستہ بند کرنے پربیوہ خاتون کا رشتہ داروں کے ہمراہ احتجاج، 5 روز گزر جانے کے باوجود متاثرہ گھرانہ سراپااحتجاج بنا ہوا ہے۔ تفصیلات کے مطابق تقریباًعرصہ 40سال سے بیوہ سکینہ بی بی کے گھر کو ملتان روڈ سے راستہ جا رہا تھا کہ ملزمان غلام عباس ،بہادر شاہ پسران سید محمد اکبر علی شاہ ،زوہیب شاہ ولد مرتضیٰ شاہ ،محسن علی آغا ولد آغا شاہ نے تھانہ مانگا منڈی کے ایس ایچ او مستینر احمدخاں سے مبینہ ساز باز ہو کر بیوہ سکینہ بی بی کے گھر کو جانے والے راستہ کو بند دوکان تعمیر کرلی جس پر شازیہ احسان ،آسیہ عنایت اور بیوہ سکینہ بی بی نے ان کو روکا تو انہوں نے ان پر زبردست تشد د کیا جس کے بعد خواتین نے15پر کال کر دی مگر تھانہ مانگا منڈی پولیس کے سب انسپکٹر میاں ریاض SIپولیس کی سرکاری گاڑی پر گئے نہ انہوں نے خواتین کی بات سنی نہ ملزمان کو دیوار بنانے سے روکا بلکہ 4گھنٹے خود وہاں پر کھڑے ہوکر دوکان کی تعمیر کرواتے رہے شام تک ملزمان نے دوکان تیار کرکے دورازہ لگا دیا سکینہ بی بی نے کہا کہ اسلحہ سے مسلح تقریباً10کے قریب افراد دوکان کے اندر بیٹھے رہتے ہیں بلکہ کئی دفعہ ملزمان ہمارے پر فائر کرتے ہیں بیوہ سکینہ بی بی،شازیہ احسان،آسیہ عنایت وغیرہ نے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف اور آئی جی پنجاب کیپٹن (ر)عارف نواز خان اور سی سی پی او لاہور امین ونیس ،ڈی آجی اپریشن ڈاکٹر حیدر اشرف سے مطالبہ کیا ہے کہ ہمارے گھر کو جانے والا راستہ فوری قبضہ گروپ سے واگزار کروایا جائے۔

مزید : علاقائی