شعیب صدیقی کی ٹرک دھماکے کے خلاف پنجاب اسمبلی میں تحریک التوائے کار

شعیب صدیقی کی ٹرک دھماکے کے خلاف پنجاب اسمبلی میں تحریک التوائے کار

لاہور( نمائندہ خصوصی) پاکستان تحریک انصاف کے ممبر صوبائی اسمبلی محمد شعیب صدیقی نے لاہور میں سگیاں پل کے قریب فروٹ کے ٹرک میں ہونے والے دھماکے کے خلاف پنجاب اسمبلی میں تحریک التوائے کار پیش کر دی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ اطلاعات کے مطابق یہ ٹرک 3دن سے وہاں کھڑا ہوا تھا جسے پولیس کو بار بار اطلاع دینے کے باوجود چیک نہیں کیا گیا اور پولیس کی نا اہلی کی بنا پر یہ حادثہ رونما ہوا جس سے متعدد عمارات اور گاڑیوں کو بھاری نقصان ہونے کے علاوہ 2افراد کی جانیں گئیں اور50کے لگ بھگ شہری زخمی ہوئے ایم پی اے شعیب صدیقی نے تحریک التوائے کار میں نشاند ہی کی ہے کہ جہاں یہ دھماکہ ہوا وہ این اے120قومی اسمبلی کا وہ حلقہ ہے۔ جہاں 17ستمبر کو ضمنی انتخاب ہونے جا رہا ہے پنجاب حکومت نے سیف سٹی کے نام پر اربوں روپے کی لاگت کا جو میگا پراجیکٹ شروع کیا ہے وہ مکمل طور پر ناکام منصوبہ ثابت ہو رہا ہے۔

لاہور میں کیمرے نصب ہونے کے باوجود مال روڈ ،فیروز پور روڈ اور دیگر جگہوں پر ایسی کاروائیاں ہو چکی ہیں جن میں معصوم شہریوں کا بھاری جانی و مالی نقصان ہوا ہے انہوں نے اپنی قرار داد میں کہا ہے کہ دہشتگردوں کو ان کاروائیوں سے روکنے کیلئے نیشنل ایکشن پلان پر مکمل عملدرآمد کرنا ضروری ہے جس میں موجودہ حکومت مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے ایم پی اے شعیب صدیقی نے قرار داد میں کہا ہے کہ سگیاں پل کا واقعہ جہاں ایک طرف قابل مذمت ہے وہیں اس حادثے کا ملک بھر میں درد محسوس کیا جا رہا ہے اور پنجاب حکومت کے اداروں کی نا اہلی پر عوام میں انتہائی بے چینی ، اضطراب اور غم و غصہ پایا جا تا ہے لہذا پنجاب اسمبلی میں اس تحریک التوائے کار پر بحث کی اجازت دی جائے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4