تحصیل لاہور کے نواحی علاقہ جہانگیرہ میں لوگ پینے کے صاف پانی کوترس گئے

تحصیل لاہور کے نواحی علاقہ جہانگیرہ میں لوگ پینے کے صاف پانی کوترس گئے

تورڈھیر(نمائندہ خصوصی) تحصیل لاہور کے نواحی علاقہ جہانگیرہ میں لوگ پینے کے صاف پانی کوترس گئے، سولرٹیوب ویل اچانک زمین بوس ہونے سے ٹیوب ویل نمبر4 نہایت اُورلوڈ ہونے کے سبب لوگوں کی ضروریات پوری نہیں ہو پاتی، ٹیوب ویل کے 3 ملازمین میں سے صرف ایک ڈیوٹی دیتا ہے جبکہ باقی دو میں ایک توسالہاسال غائب جبکہ دوسرا کبھی کبھار دکھائی دینے لگتا ہے،متعلقہ حکام سے اصلاح احوال کامطالبہ۔تفصیلات کے مطابق محلہ حیات آباد جہانگیرہ(صوابی) میں سولر ٹیوب ویل گزشتہ چھ ماہ پہلے اچانک زمین بوس ہوگیا جسکی جگہ دوسرا ٹیوب کھودنے کاکام تاحال مکمل نہ کیا جاسکا جبکہ محلہ حیات آباد، محلہ اعوان، محلہ جنازہ گاہ اورمحلہ بازار کے مکینوں کیلئے فراہمی آب ٹیوب نمبر 4 حیات آباد سے جاری کرائی گئی تاہم وہاں نصب دو عددموٹرپمپ میں سے ایک موٹرپمپ 2 ماہ پہلے خراب ہوگیا ہے اور صرف ایک موٹرپمپ3 انچ کا چالو حالت میں ہے جو متعلقہ علاقہ کی ضروریات کیلئے ناکافی ہے اوربسااوقات مکین پانی کے بوند بوند کوترستے ہیں جبکہ مذکورہ ٹیوب ویل پرڈیوٹی دینے کیلئے تین ملازمین مامور رکھے گئے ہیں جن میں صرف ایک تاج محمد نامی شخص ٹیوب ویل کے قریب رہائش پذیر ہونے سے مکمل طور پر ڈیوٹی سرانجام دیتا ہے جبکہ باقی دونوں ملازمین انتہائی کام چوری سے کام لیتے ہیں اور اس عمل پر ایک کی کئی بار تنخواہ بھی بلاک کی جاچکی ہے تاہم سیاسی اپروچ پراسکی تنخواہ دوبارہ جاری کی جاتی ہے مذکورہ علاقوں کے لوگوں نے ڈی سی صوابی اور ایکسئین پبلک ہیلتھ سے پرزور مطالبہ کیا ہے کہ سولر ٹیوب ویل جلدازجلد مکمل کراکے چالوکیا جائے تاکہ علاقہ میں پانی کی عدم دستیابی کا مسئلہ فی الفور حل کرایاجاسکے۔

 

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر