حضرت علیؓ کے ہاتھوں مارے جانے والے یہودی پہلوان مرحب کو نواز شریف سے تشبیہہ دیکر عابد شیر علی نے فتنہ جگا دیا ۔آپ بھی جانئے کہ درحقیقت مرحب کون تھا؟

حضرت علیؓ کے ہاتھوں مارے جانے والے یہودی پہلوان مرحب کو نواز شریف سے تشبیہہ ...
حضرت علیؓ کے ہاتھوں مارے جانے والے یہودی پہلوان مرحب کو نواز شریف سے تشبیہہ دیکر عابد شیر علی نے فتنہ جگا دیا ۔آپ بھی جانئے کہ درحقیقت مرحب کون تھا؟

  

لاہور (نظام الدولہ) جب سے میاں نوازشریف کی اپنی نااہلی کے بعد ا سلام آباد سے لاہور تک ریلی نکالنے کا ہنگامہ شروع ہوا ہے انکے حمائیتیوں اورانتہائی قریبی ساتھیوں نے بڑے دلچسپ فقرے تخلیق کرنے کے ساتھ بعض ایسے حماقت آمیز جملے بھی کہہ ڈالے ہیں جو انکی جگ ہنسائی کا موضوع بنتے جارہے ہیں۔

میاں نواز شریف کے بھانجے اور ممتاز سیاستدان عابد شیر علی نے تو اپنے ٹویٹر پر تاریخی غلطی کا ارتکاب کرتے ہوئے اپنے لیڈر کو ”مرحب“ سے منسوب کردیا ہے۔ ان کے اس فقرہ کو (ن) لیگ کے حق میں نیا فتنہ قرار دے دیا ہے اور عابد شیر علی کی اس پر خوب جگ ہنسائی ہو رہی ہے۔ عابد شیر علی نے مبینہ ٹویٹر پر لکھا ہے۔

پہلے للکار رہے تھے کہ کہاں ہے مرحب

جب وہ میدان میں آیا تو برا مان گئے

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ چوہدری نثار دراصل اس وقت کہاں ہیں؟ بالآخر پتہ چل گیا

شعرانہ انداز میں لکھے جانے والے اس جملہ کی وجہ تسمیہ تو یہی بنتی ہے کہ نوازشریف کو سب میدان میں اترنے کا چیلنج کرتے تھے اب وہ اترے ہیں تو سب اس پر برا مان رہے ہیں۔عابد شیر علی یقیناً مرحب سے لاعلم ہیں کہ یہ مرحب کون تھا ؟قلعہ خیبر یہودیوں کا گڑھ تھا جہاں یہودی مسلمانوں کے خلاف فتنے شروع کرکے سازشوں میں الجھا دیتے تھے۔ قلعہ خیبر کو غیر معمولی گڑھ سمجھا جاتا تھا اور اسکی وجہ مرحب جیسا پہلوان تھا جس کی دہشت اور قوت سے حملہ آور قلعہ خیبر فتح نہیں کرسکتے تھے۔ مرحب ایک طاقتوریہودی پہلوان تھا جس کو مشہورترین غزوہ خیبر کے دوران حضرت علی ؓنے تلوار کا وار کر کے جہنم واصل کیااور اس کے سر کو خود زرہ سمیٹ کاٹ دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ عمران خان نے نواز شریف کے قافلے کی ایسی تصاویر شیئر کر دیں کہ دیکھنے والے دیکھتے ہی رہ گئے

مرحب کے قتل کا واقعہ تاریخ میں بہت مشہور ہے ،غزوہ خیبر کی جب فتح مشکل ہورہی تھی تورسول کریم ﷺ نے اپنے داماد اور باب العلم شیر خدا حضرت علیؓ کو میدان میں اتارا تو معلوم ہوا حضرت علیؓ آشوب چشم میں مبتلا ہیں۔ رسول خدا ﷺ نے اپنا لعاب دہن سرکار علی مقامؓ کی آنکھوں میں لگایا تو آپؓ کی آنکھیں پہلے سے زیادہ پرنور ہوگئیں۔آپؓ تلوار سونت کرقلعہ خیبر کی جانب بڑے تو پہلے آپ کے مقابل مرحب کا بھائی آیا،آپؓ نے اسے جہنم واصل کیاتو مرحب خود رجز پڑھتا ہوا حضرت علیؓ شیر خداکے مقابل آگیا۔ حضرت علیؓ نے کچھ دیر مقابلہ کے بعد اس کو سر سے سینے تک تلوار کے ایک ہی وار سے چیر دیا اور مسلمانوں نے قلعہ خیبر فتح کر لیا۔ اس تاریخی پس منظر کو جانے بغیر عابد شیر علی کا میاں نواز شریف کو استعارة مرحب کہناموجودہ حالات میں سب سے فاش غلطی کہا جارہا ہے۔

مزید : قومی