مقبوضہ وادی میں مزید 4کشمیری نوجوان شہید

مقبوضہ وادی میں مزید 4کشمیری نوجوان شہید

سرینگر (مانیٹرنگ ڈیسک ، نیوز ایجنسیاں) مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی کے دوران ضلع بار ہمو لہ میں مزید 4 نوجوان شہید کر دیے ۔ تازہ شہادتوں کے نتیجے میں گزشتہ روز سے شہید ہونیوالوں کی تعداد بڑھ کر پانچ ہوگئی۔ کشمیر میڈیا سر و س کے مطابق ان نوجوانوں کو بھارتی فوج کی 32راشٹریہ رائفلز اور 9پیرا کمانڈوز نے رفیع آباد میں محاصرے اور تلاشی کی مشترکہ کارروائی کے دوران شہیدکیا۔ آخری اطلاعات تک علاقے میں بھارتی فوج کا آپریشن جاری تھا۔قابض فوج کی طرف سے آپریشن کے دوران گن شپ ہیلی کاپڑوں کا بھی استعمال کیا جا رہا ہے۔ بھارتی فوج نے آپریشن کے دوران گن شپ ہیلی کاپٹروں کا بھی استعمال کیا۔ قبل ازیں رفیع آباد میں ہی فوج کا ایک کمانڈو ایک حملے میں زخمی ہو گیا تھا۔ ادھر ضلع پلوامہ کے علاقے گدورہ میں لوگوں نے تلاشی اور محاصرے کی کارروائی کیخلاف زبردست احتجاجی مظاہرے کئے ۔ فوجیوں نے مظاہرین کو منتشر کر نے کیلئے طاقت کا وحشیانہ استعمال کیا جس کے بعد علاقے میں جھڑپیں شروع ہو گئیں۔ دوسری طرف چیئرمین جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ محمد یاسین ملک اور دختران ملت نے اپنے بیانات میں آسیہ اندرابی اور انکی دو ساتھیوں کی منڈولی جیل سے نئی دلی کی بدنام زمانہ تہاڑ جیل میں خفیہ منتقلی کی شدید مذمت کی ہے ۔گزشتہ روزآسیہ اندرابی کے رشتہ دار جب ملاقات کیلئے نئی دلی کی منڈولی جیل پہنچے تو جیل انتظامیہ کی طرف سے انہیں بتایا گیا آسیہ اندرابی کو اپنی دونوں ساتھیوں کے ہمراہ تہاڑ جیل منتقل کر دیا گیا ہے جس پر اہلخانہ حیران رہ گئے۔ادھر گوجر بر ا د ری سے وابستہ افراد نے پولیس کی حراست میں کمیونٹی لیڈر طالب حسین پر تشدد کیخلاف جموں کے ضلع رام بن کے علاقے بانیہال میں احتجا جی ریلی نکالی ۔ طالب حسین نے کٹھوعہ میں اجتماعی عصمت دری اور قتل کا نشانہ بننے والی ننھی آصفہ کو انصاف کی فراہمی کیلئے مہم چلائی تھی۔ مظا ہرین نے بانیہال میں تحصیل دار کے دفتر کے احا طے میں احتجاجی دھرنا دیا۔دریں اثناء جموں میں سابق وزیر اعلیٰ فاروق عبداللہ کی رہائش گاہ پر تعینات بھارتی سینٹرل ریزروپولیس فورس کے اہلکاروں کی ہاتھوں حال ہی میں شہید ہونیوالے کشمیری نوجوان سید مرفاد شاہ کے اہلخا نہ اورانجمن امامیہ جموں نے قاتل فوجیوں کیخلاف مقدمہ درج کرنے کا مطالبہ کیا ہے جبکہ ضلع پلوامہ کے علاقے ترال میں پولیس نے چھا پو ں کے دوران ایک آزاد پسند کارکن کے والد اور بھائی سمیت متعدد شہریوں کو گرفتار کرلیا ہے۔لندن میں قائم جموں وکشمیر کونسل فار ہیومن را ئٹس کے صدر سیدنذیر گیلانی نے اپنے ایک مضمون میں لکھاہے بھارتی سپریم کو جموں وکشمیر کے اسٹیٹ سبجیکٹ کے معاملے میں دخل اندا ز ی کا کوئی حق نہیں ،بھارتی حکومت اور مقبوضہ کشمیر میں اس کی کٹھ پتلی انتظامیہ کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں کے مطابق ہی

کام کرناہوگا۔

کشمیری شہید

مزید : صفحہ آخر