پشاور، حلقہ پی کے 69 میوں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ بدستورجاری

پشاور، حلقہ پی کے 69 میوں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ بدستورجاری

پشاور(سٹی رپورٹر)پشاور کے گنجان آباد علاقہ بڈھنی پی کے 69 میں غیر اعلانیہ طویل لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ بدستور جاری ہے شہری علاقوں میں 12سے14جبکہ دیہی علاقوں میں 16سے 20گھنٹے تک بجلی کی فراہمی معطل رہتی ہے ۔بجلی کی طویل بندش سے کاروبار زندگی بری طرح متاثر ہے جبکہ کئی علاقوں میں ٹیوب ویل نہ چلنے سے لوگ پانی کے لیے ترس رہے ہیں ، اس کے باوجود بجلی کی طویل لوڈ شیڈنگ پی کے 69بڈھنی کے عوام کے ساتھ انتہائی ظلم کے مترادف ہے ، بجلی سے چلنے والے چھوٹے کاروبار مکمل طور پر بند ہیں جن سے معاشی مسائل نے جنم لیا ہے ، عوام اور تاجر تنظیمیں ان حالات سے انتہائی پریشان ہوکر احتجاج کی دھمکی دی ہے ۔اور اس سخت گرمی میں بچے اور خواتیں دور دور سے سروں پرپانی لانے پر مجبور ہیں پی کے 69بڈھنی کے عوام نے احتجاج کی دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ گورنر ٹیسکو کے اعلی حکام اس ناروا لوڈشیڈنگ کا نوٹس لیں ۔ واپڈا حکام نے علاقہ میں ڈیجیٹل میٹروں کی تنصیب کرکے کنڈا کلچر کا خاتمہ بھی کردیا ہے اور آئے روز بجلی بلوں میں اضافہ سے اہلیان علاقہ کو مزید ذہنی اذیت میں مبتلا کردیا ہے جس کے باوجود علاقہ میں بدترین لوڈشیڈنگ جاری ہے‘بصورت دیگر ہم ایکسین اور ایس ڈی او کے دفتر کے سامنے سخت گیر احتجاج کرینگے ۔عوامی سماجی حلقوں نے اعلیٰ حکام سے بجلی بندش کے خلاف فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر