کوہاٹ،قتل ور اغوا برائے تاوان کے مقدموں میں مطلوب اشتہاریوں سمیت 18گرفتار

کوہاٹ،قتل ور اغوا برائے تاوان کے مقدموں میں مطلوب اشتہاریوں سمیت 18گرفتار

کوھاٹ (بیورو رپورٹ) کوہاٹ استرزئی پولیس نے دوہرے قتل اور اغواء برائے تاوان کے مقدمات میں مطلوب خطرناک اشتہاریوں سمیت اٹھارہ مشتبہ افراد کو گرفتار کرلیا ہے۔کاروائی میں غیر قانونی ہتھیار بھی برآمد کرلئے گئے ہیں۔ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کوہاٹ سہیل خالد کی خصوصی ہدایت پر سماج دشمن عناصر کے خلاف جاری کاروائیوں کے سلسلے میں پولیس کی بھاری نفری نے ڈی ایس پی ہیڈ کوارٹر صنوبر خان اور ایس ایچ او استرزئی قسمت خان کی سربراہی میں مقامی حدود کے مختلف علاقوں میں بھر پوراور طویل کریک ڈاؤن کرتے ہوئے دو بھائیوں مدثر حسین اور طارق حسین کے دوہرے قتل کے مقدمے میں گزشتہ چار سال سے مطلوب اشتہاری مجرم عبداللہ کامل کواسترزئی بالا سے گرفتار کرلیا۔اسی طرح ایک اورچھاپہ مار کاروائی کے دوران اغواء برائے تاوان کے مقدمے میں مطلوب اشتہاری مجرم محمد رؤف سکنہ اورکزئی کو حراست میں لیا گیاجبکہ مختلف مقامات پر کریک ڈاؤن کے نتیجے میں پولیس نے اٹھارہ مشتبہ افراد کو گرفتار کرکے انکے قبضے سے مجموعی طور پر ایک کلاشنکوف،ایک ریپیٹر،تین بندوق،دو رائفل،پانچ پستول اور مختلف بور کے سینکڑوں کارتوس برآمد کرلی ہے۔خیال رہے کہ زیر حراست اشتہاری مجرم عبداللہ کامل نے سال2014کے دوران معمولی تنازعے پر دو بھائیوں مدثر حسین اور طارق حسین کو فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتار دیا تھا جبکہ اغواء کار اشتہاری مجرم محمد رؤف نے گزشتہ سال کچئی کے رہائشی سید ضامین خان کو تاوان کی غرض سے اغواء کرلیا تھا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر