کینیڈا کیساتھ تنازع مزید شدت اختیار کرگیا، فضائی سروس، تجارتی تعلقات منقطع اور طلباء کو واپس بلانے کے بعد سعودی عرب اب کیا کرنے جارہا ہے؟ حیران کن خبرآگئی

کینیڈا کیساتھ تنازع مزید شدت اختیار کرگیا، فضائی سروس، تجارتی تعلقات منقطع ...
کینیڈا کیساتھ تنازع مزید شدت اختیار کرگیا، فضائی سروس، تجارتی تعلقات منقطع اور طلباء کو واپس بلانے کے بعد سعودی عرب اب کیا کرنے جارہا ہے؟ حیران کن خبرآگئی

  

ریاض (ویب ڈیسک)انسانی حقوق کے کارکنوں کی رہائی کے مطالبے پر سعودی عرب نے کینیڈا کو خبردار کیا ہے وہ اپنی غلطی کی تلافی کرے یا مزید کارروائی کے لیے تیار ہو جائے۔ سعودی عرب نے طلبا کے بعد اپنے مریضوں کو بھی کینیڈا سے کسی دوسرے ملک منتقل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

 سعودی وزیر خارجہ عادل الجبیر نے کہا کہ ہم نے جاری سرمایا کاری بند نہیں کی، نئی پابندی لگائی ہے، مسئلہ انسانی حقوق کا نہیں بلکہ قومی سلامتی کا ہے۔

دوسری جانب کینیڈین وزیراعظم جسٹن ٹروڈو اپنے موقف پر ڈٹ گئے ہیں اور کہا ہے کہ انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر خاموش نہیں رہیں گے. انہوں نے مزید کہا کہ جہاں بھی انسانی حقوق کا سوال آئے گا کینیڈا پر زور اور دو ٹوک انداز میں آواز اٹھائے گا۔ان کا کہنا تھا کہ سعودی عرب کےساتھ تعلقات خراب کرنا نہیں چاہتے۔

تمام تر صورتحال کے باوجود سعودی وزیر توانائی کا کہناہے کہ کینیڈا کےلیے تیل کی فراہمی جاری رہے گی۔

مزید : عرب دنیا