پنجاب : سرکاری سکولز میں طلبا وطالبات کے 3لاکھ بوگس داخلوں کا انکشاف

  پنجاب : سرکاری سکولز میں طلبا وطالبات کے 3لاکھ بوگس داخلوں کا انکشاف

  

ملتان (سٹاف رپورٹر ) پنجاب کے سرکاری سکولز میں طلباوطالبات کے 3لاکھ بوگس داخلوں کا انکشاف ہوا ہے ۔ بتایا گیا ہے کہ محکمہ تعلیم سکولز پنجاب نے پنجاب ایجوکیشن فاءونڈیشن کے سٹوڈنٹس انفارمیشن سسٹم ( ایس آئی ایس )کی طرز پر سرکاری سکولز میں داخل طلبا وطالبات کے کواءف حاصل کرکے محفوظ کئے جن میں ان کے نام‘ڈیٹ آف برتھ‘ ولدیت‘ ب فارم‘ والدین کے شناختی کارڈز نمبر‘ والدین کا (بقیہ نمبر58صفحہ7پر )

پیشہ و تعلیمی قابلیت و گھر کا ایڈریس شامل ہے ۔ اس پر صوبے بھر کے سرکاری سکولز میں 3لاکھ طلبا وطالبات کے بوگس داخلے پکڑے گئے ۔ ذراءع کے مطابق مختلف سکولز سربراہان اور افسران تعلیم نے اپنی بہترین کارکردگی ظاہر کرنے اور انرولمنٹ کا ٹارگٹ پورا کرنے کے لئے بوگس داخلے کئے ۔ کاغذوں میں بڑی تعداد میں طلبا وطالبات کے داخلے ظاہر کئے گئے ۔ طلباوطالبات کے کواءف کا ڈیٹا کمپیوٹرائزڈ ہونے کے بعد جعلسازی سامنے آئی ہے ۔ معلوم ہوا ہے کہ ابھی صوبے کے 50فیصد سکولز میں داخلوں کی چھان بین کے بعد 3لاکھ بوگس داخلے سامنے آئے ہیں ‘ ابھی مزید سکولز کے داخلوں کی چھان بین باقی ہے جس میں مزید لاکھوں طلباو طالبات کے بوگس داخلے سامنے آسکتے ہیں ۔ اس صورتحال پر محکمہ تعلیم سکولز کے حکام‘ افسران اور سکولز سربراہان و اساتذہ میں کھلبلی مچ گئی ہے اور بوگس داخلوں کے حامل سکولز سربراہان و اساتذہ کے ساتھ ساتھ متعلقہ افسران تعلیم کے خلاف بھی کارروائی کا فیصلہ کرلیا گیا ہے ۔

بوگس داخلے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -