نوشہرہ میں ن لیگ مریم نواز  کی گرفتاری پر سراپا احتجاج

نوشہرہ میں ن لیگ مریم نواز  کی گرفتاری پر سراپا احتجاج

  

نوشہرہ(بےورورپورٹ)پاکستان مسلم لیگ ن کی مرکزی نائب صدر مریم نواز کی گرفتاری کے خلاف مسلم لیگ ن ضلع نوشہرہ کے کارکنان سراپا احتجاج مسلم لیگی کارکنوں نے صوبائی ترجمان اختیا ر ولی خان اور ضلعی جنرل سےکرٹری مشیت الرحمن کی قیادت میں نوشہرہ شوبرا چوک سے نوشہرہ پریس کلب تک واک کیا موجودہ مرکزی وصوبائی حکومت کے خلاف نعرے بازی اور تمام سیاسی قائدین کا فوری رہائی کامطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان اس ملک کا سول ڈکٹیٹر ہے ہم نے فوجی ڈکٹیٹر کی ڈکٹیشن نہیں مانی تھی تو عمران خان کیا چیز ہے وہ تو خود ایک کٹھ پتلی وزیراعظم ہے وہ کیا کسی کو ڈکٹیشن دے گا وہ تو خود ڈکٹیشن لینے والا ہے ان خیالات کااظہار پاکستان مسلم لیگ ن خیبرپختونخوا کے ترجمان اختیار ولی خان اور ضلع نوشہرہ کے جنرل سےکرٹری مشیت الرحمن نے نوشہرہ پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر سینئر مسلم لیگی رہنما یونس بٹ، ضلع نوشہرہ کے نائب صدر شہزاد امین، نبی امین، نہال، شاہ نواز ، سعید خان کے علاوہ دیگر مقامی وضلعی رہنما موجود تھے انہوں نے کہا کہ ایسے حالات میں کہ ملک میں سیاسی اور جعرافیائی صورتحال ابتر اور ملک کی سرحدوں پر فوج حالت جنگ میں ہے لیکن اس کے باوجود عمران خان اور ان کی پوری ٹیم نے پاکستان کی سا لمیت کو خطرے میں ڈال دیا ہے مریم نواز کی گرفتاری کشمیر کے نہتے مسلمانوں کے ساتھ ظلم کی پاداش میں ہوئی ہے کیونکہ وہ کشمیر یکجہتی ریلی کی قیادت کرنے کےلئے جارہی تھی اسی خوف سے مریم نواز کو گرفتار کیا کیا عمران خان نے امریکہ جاکر کشمیر کا بھی سودا کرڈالا؟ اس لئے تو وہ کہہ رہاتھا کہ مودی کامیاب ہوکر حالات سدھر جائیں گے واضح رہے کہ مظاہرین نے شوبرا چوک جی ٹی روڈ پراحتجاجاً ٹائرجلاکر روڈ بلاک کررکھا۔ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -