صوبائی دارالحکومت میں رواں سال قتل کی 247وارداتیں رپورٹ 

صوبائی دارالحکومت میں رواں سال قتل کی 247وارداتیں رپورٹ 

  

لاہور(کر ائم رپو رٹر)صوبائی دارالحکومت  میں رواں سال کے دران قتل و غارت گری کی ہولناک 247وارداتیں رپورٹ  کی گئی۔تفصیلات کے رواں برس اپنوں کے ہاتھوں اپنوں کے قتل کی ایسی وارداتیں ہوئیں جن کو سن کر انسانیت کا درد رکھنے والا ہر شخص تڑپ اٹھاتا ہے۔ رواں سال مختلف واقعات میں قتل کے247 وارداتیں رپورٹ ہوچکی ہیں۔پولیس ریکارڈ کے مطابق رواں سال بیوی کے ہاتھوں شوہر کے قتل کی پانچ وارداتیں رپورٹ ہوئیں۔ڈپٹی ڈاکٹر واسا شاہد حفیظ کا قتل حالیہ مثال ہے،بھائی نے غیرت کے نام پر بہن اور بیٹی کے پسند کی شادی سے منع کرنے پر باپ کو قتل کیا،چھ واقعات میں بھائی کے ہاتھ سگے بھائی کے خون سے رنگے گئے۔شاہدرہ کے فرحان کو سوتے ہوئے قتل کرنے والے عبدالباسط کا کہنا ہے کہ بھائی نے پورے خاندان کو تنگ کر رکھا تھا،بھائی کے ہاتھوں بھائی، باپ کے ہاتھوں بیٹے کے قتل ہونے والی وارداتیں اب معمول کا حصہ بن چکی ہیں۔

مزید :

علاقائی -