پارا چنار، سیاسی بنیادوں پر مخلص افسران کے تبادلے اور نااہل افسران کی تعیناتی پراظہار تشویش

پارا چنار، سیاسی بنیادوں پر مخلص افسران کے تبادلے اور نااہل افسران کی ...

  

پاراچنار(نمائندہ پاکستان)ضلع کرم کے قبائلی رہنماؤں اور عمائدین نے علاقے میں سیاسی بنیادوں پر مخلص افسران کے تبادلے اور نااہل افسران کی تعیناتی پر تشویش کا اظہار کیا ہے اور حکومت سے فوری طور پر مقامی ایکسین کی تعیناتی اور نا اہل ایکسین کی تبادلے کا مطالبہ کیا ہے پاراچنار میں مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ضلع کرم کے قبائلی عمائدین  عنایت علی طوری، محمود علی جان  طوری، کربلائی عنایت  حسین، حشمت بنگش، حاجی صفت علی اور دیگر نے کہا کہ قبائلی اضلاع میں عرصے بعد ترقیاتی کام جاری ہیں جسمیں مخلص اور ایماندار افسران جان فشانی سے مصروف ہیں جس میں وسیع پیمانے پر سڑکوں کی تعمیر اور کالجز اور دیگر ترقیاتی کام شامل ہیں انہوں نے کہا کہ مقامی ایکسین صاحبان جو کہ اپنے فرائض احسن طریقے سے انجام دے رہے تھے ان کو نارمل دورانیے سے پہلے ضلع کرم سے ٹرانسفر کرنا علاقے میں جاری ترقیاتی کاموں میں خلل ڈالنے کے مترادف ہے رہنماؤں نے کہا کہ موجودہ تعینات ہونے والا ایکسین ہائی وے ضیاء الاسلام آٹھ مہینے قبل ضلع کرم میں تعینات رہا ہے اور اہل علاقہ ان کے کرتوتوں اور نااہلی سے بخوبی واقف ہیں اور اسی نااہل افسر کی نااہلی کے باعث 2018-19 اے ڈی پی میں اپر کرم کے مختلف  سکیموں کی منظوری حیلے بہانے بناکر غریب عوام کی حق تلفی کی ہے قبائلی عمائدین نے کہا کہ کچھ عرصہ قبل وسطی کرم کے کچھ تنگ نظر لوگوں نے مقامی افسران کے تبادلے کا غیر قانونی مطالبہ سامنے آیا تھا اس نوٹیفکیشن سے یہ بات واضح ہوتی کہ حالیہ تبادلے کسی اور کی ایما پر غیر قانونی طور پر کئے گئے ہیں انہوں نے کہا کہ مقامی افسران ایکسین ہائی وے  اسد علی اور ایکسین بلڈنگ اینڈ کنسٹرکشن مہدی حسین کے تبادلے کے بعد  شلوزان، کراخیلہ، خرلاچی سمیت متعدد لنکس روڈز اور دیگر ترقیاتی کام تعطل کا شکار ہے انہوں نے حکام بالا، پارلیمنٹرینز اور دیگر متعلقہ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ فوری طور مقامی افسران کے تبادلے کو منسوخ کرکے انہیں ضلع کرم میں دوبارہ تعیناتی کے احکامات صادر فرمائیں اور موجودہ نا اہل اور کرپٹ ایکسین کی فی الفور تبدیل کیا جائے بصورت دیگر احتجاج کا سلسلہ شروع کریں گے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -