محکمہ ایکسائز: افسروں، ملازمین کو بلیک میل کرنیوالا گروہ بے نقاب

    محکمہ ایکسائز: افسروں، ملازمین کو بلیک میل کرنیوالا گروہ بے نقاب

  

ملتان (نیوز رپورٹر) محکمہ ایکسائز ٹیکسیشن اینڈ نارکوٹکس کنٹرول ملتان آفس میں پچھلے چند سالوں سے افسران و ملازمین کے خلاف گمنام درخواستوں اور بلیک میلنگ پر مبنی وائس میسجز سکینڈل میں ملوث اہلکاروں نے ڈائریکٹر ایکسائز ملتان عبداللہ خان جلبانی کے دفتر میں تحریری(بقیہ نمبر46صفحہ6پر)

 معافی نامہ پیش کرکے آئندہ اس قبیح و غیر اخلاقی اقدام نہ اٹھانے کی یقین دہانی کروادی ہے جس کے باعث ایک ہفتہ سے زبان زد عام وائس میسجز سکینڈل اپنے منطقی انجام کو پہنچ گیا ہے ذرائع کے مطابق محکمہ ایکسائز میں پچھلے چند سالوں سے ایکسائز آفس ملتان میں پرکشش سرکلز اور موٹر سیریز کے حصول سمیت تھیٹرز پر ڈیوٹی لگوانے کے لیئے افسران و ملازمین کو بلیک میل کرنے کے لیئے منفی پراپیگنڈہ پر مبنی درخواستوں کا سلسلہ جاری تھا تاہم ڈائریکٹر تنویر عباس گوندل کی ملتان آفس تعیناتی پر ان بوگس درخواستوں کا سلسلہ بھی تھم گیا تھا لیکن ان کے او ایس ڈی بنائے جانے اور ڈائریکٹر عبداللہ خان جلبانی کی ملتان تعیناتی کے بعد درخواستوں سمیت وائس میسجز کا سلسلہ اپنے عروج پر جاپہنچا ان وائس میسجز کے خالق نے طمع حرص کے تابع آکر ڈائریکٹر اور ڈپٹی ڈائریکٹر سمیت افسران کی عزت اچھالنے میں کوئی کسر نہ چھوڑی وائس میسجز پر ڈائریکٹر ایکسائز نے دو ملازمین انسپکٹر ملک عبدالمجید نانڈلہ، احسان خان سدوزئی، ڈپٹی ڈائریکٹر خالد حسین قصوری اور ای ٹی او میاں فاروق احمد کو شوکاز نوٹسز جاری کرکے جواب طلب کرلیا جبکہ گذشتہ روز ڈائریکٹر کے دفتر میں دونوں ای ٹی اوز اور ایک قومی اخبار کے صحافی کی موجودگی میں دونوں انسپکٹرز نے تحریری معافی نامہ دینے سمیت یقین دہانی کروائی ہے کہ آئندہ اس نوعیت کی درخواست بازی نہیں کی جائے گی اس حوالے سے ڈائریکٹر ایکسائز عبداللہ خان جلبانی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ  گمنام درخواست گزاروں نے یقین دہانی کروائی ہے کہ آئندہ وہ ادارے کی ساکھ کو نقصان پہنچانے کے کسی عمل کا حصہ نہ بنیں گے۔  

معافی نامہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -