شہباز گل کی گرفتاری کے بعد شیخ رشید کے گھر پر بھی چھاپہ، پولیس کی تردید

شہباز گل کی گرفتاری کے بعد شیخ رشید کے گھر پر بھی چھاپہ، پولیس کی تردید
شہباز گل کی گرفتاری کے بعد شیخ رشید کے گھر پر بھی چھاپہ، پولیس کی تردید
سورس: Screen Grab

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید احمد نے الزام عائد کیا ہے کہ ان کے اسلام آباد کے گھر پر چھاپہ ماراگیا ہے جب کہ لال حویلی میں بھی سادہ لباس اہلکاروں کو بھیجا گیا۔ دوسری جانب اسلام آباد پولیس نے سابق وزیر داخلہ کے گھر چھاپے کے الزامات کی تردید کی ہے۔

اپنے ایک ویڈیو پیغام میں شیخ رشید نے کہا "آج 10 محرم ہے اور یزیدی قوتوں کو کوئی شرم نہیں، انہوں نے چار گاڑیوں کے ساتھ میرے اسلام آباد کے گھر پر چھاپہ مارا اور لال حویلی میں سادہ لباس اہلکاروں  کی پوری پلٹن بھیجی ہے۔ان کو بتانا چاہتا ہوں کہ میں نے اپنی آدھی جوانی جیل میں کاٹی ہے اور آوارہ کلاشنکوفوں میں سات سال قید ہوئی ہے، جیل میری سسرال ہے، ہتھکڑی میرا زیور ہے اور موت میری محبوبہ ہے۔"

انہوں نے کہا "میں مقابلے سے بھاگنے والا نہیں ہوں، میں کوئی منی لانڈرر نہیں ہوں، میں کوئی سامراج کا ایجنٹ نہیں ہوں، میں پاکستان کی عظمت اور ترقی کا سپاہی ہوں۔ میں ہر قیمت پر پاکستان کی عظمت اور پاکستان  کے اصول اور عمران خان کی دوستی نبھاؤں گا۔ "

شیخ رشید کا مزید کہنا تھا "جیل سعودی عرب اور لندن بھاگنے والے بھگوڑوں کو ڈرا سکتی ہے، میں نے اپنا بکسہ باندھا ہوا، دوائیاں رکھ لی ہیں، وارنٹ لے کر آجاؤ ساتھ چلا جاؤں گا، اگر بغیر وارنٹ میرے گھر میں داخل ہوئے تو اپنی حفاظت کرنے کا قانونی اور آئینی حق رکھتا ہوں۔"

خیال رہے کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کے چیف آف سٹاف ڈاکٹر شہباز گل کو اسلام آباد سے گرفتار کیا گیا ہے۔ 

دوسری جانب اسلام آباد پولیس نے شیخ رشید کے گھر چھاپے کے دعویٰ کی تردید کی ہے۔ ترجمان اسلام آباد پولیس نے اپنے بیان میں کہا "اسلام آباد کیپیٹل پولیس کی طرف سے چھاپے کی خبر میں کوئی صداقت نہیں، سیاسی لیڈرز کی گرفتاریوں کے متعلق پراپیگنڈہ مہم چلائی جارہی ہے۔اسلام آباد پولیس کے ترجمان سے جاری شدہ خبر ہی تصدیق شدہ ہوگی، شہریوں سے گزارش ہے کہ افواہوں پر کان نہ دھریں۔"

مزید :

Breaking News -اہم خبریں -قومی -