بھٹو کا ادارے قومیانے کامقصدمزدور کو استحصال سے نجات دلانا تھا،ترجمان

بھٹو کا ادارے قومیانے کامقصدمزدور کو استحصال سے نجات دلانا تھا،ترجمان

  



اسلام آباد )خصوصی ر پو رٹ(پاکستان پیپلز پارٹی نے وزیراعظم نواز شریف کی جانب سے پاکستان پیپلز پارٹی کے بانی شہید ذوالفقار علی بھٹو پر بے جا تنقید کی سخت مذمت کی ہے۔ پارٹی کے ترجمان نے میڈیا آفس اسلام آباد سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا کہ نواز شریف تاریخی تناظر کو سمجھنے سے عاری ہیں اور انہیں 70 کی دہائی میں صنعتوں کو قومیائے جانے کی تاریخی اہمیت اور ضرورت کا کوئی علم نہیں۔ ترجمان نے کہا کہ 70 کی دہائی میں قومیائے جانے والی پالیسی مزدوروں کے ظالمانہ استحصال کو روکنے اور سرمایہ داری کے بے لگام گھوڑے کو لگام دینے کے لئے نافذ کی گئی تھی۔ قومیائے جانے کی پالیسی وقت کی ضرورت تھی، جس کے لئے غیرمعمولی وژن، قیادت، ہمت اور جذبے کی ضرورت تھی تاکہ استحصالی قوتوں کوروکا جا سکے اور سرمایہ داری کے شکنجے سے مزدوروں اورکسانوںکو نکال کر ان کا استحصال ختم کیا جائے۔ ترجمان نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی کو اس بات پر فخر ہے کہ اس کے بانی کا وژن اور ہمت ایک ایسی قیادت تھی جس نے غریبوں اور مزدوروں کو استحصالی شکنجے سے نجات دلائی۔ یہ شہید ذوالفقار علی بھٹو ہی کا کارنامہ تھا کہ انہوں نے مزدوروں کے جذبات کو قابو میں رکھا اور معاشرے کو انتشار سے بچایا۔ پارٹی کو اپنے اس کارنامے پر فخر ہے۔ ترجمان نے کہا کہ وزیراعظم کے اس بے جا تبصرے سے ان شکوک و شبہات کو تقویت ملتی ہے کہ تمام ریاستی اداروں میں پرامن تبدیلی کے بعد اس سال کے آخر میں موجودہ حکومت اپنے مخفی ایجنڈے کے ساتھ ظاہر ہو جائے گی جس میں وہ یہ کوشش کرے گی کہ غریبوں کا خون چوسے اور سرمایہ داروں کا ساتھ دے۔ ترجمان نے کہا کہ پارٹی کبھی بھی اس بات کی اجازت نہیں دے گی کہ اپنے من پسند سرمایہ داروں کے ذریعے مزدوروں کا استحصال کیا جائے اور کسی کو بھی اس بات میں کوئی شک نہیں ہونا چاہیے کہ پارٹی کبھی بھی مزدوروں اور محنت کشوں کا خون چوسنے کی کسی کو بھی اجازت دے گی۔

مزید : صفحہ آخر


loading...