دہشت گردی سے نقصان!

دہشت گردی سے نقصان!

  



قومی اسمبلی میں تاخیر سے جواب دیا گیا، تاہم اب بتا ہی دیا گیا ہے کہ پاکستان کو جب سے دہشت گردی کا سامنا ہے اس کی وجہ سے50ہزار پاکستانی شہری شہید ہوئے، ان میں بوڑھے، جوان، خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔ یہ بھی بتایا گیا ہے کہ دہشت گردی کی وجہ سے پاکستان کو مالی طور پر80ارب ڈالر کا نقصان ہو چکا ہوا ہے۔یہ اعداد و شمار بڑے ہی دُکھ والے ہیں کہ پاکستان ایک اسلامی ملک ہے جس میں مسلمان ہی بستے ہیں اور یہاں دہشت گردی کی وارداتیں کرنے والے بھی خود کو بہتر مسلمان کہتے اور پاکستانیوں کو کم تر گردان کر یہاں اپنی پسند کی حکومت چاہتے ہیں۔

دہشت گردی کے حوالے سے یہ معمولی اعداد و شمار ہیں، ورنہ نقصان کا اندازہ تو اس سے کہیں زیادہ ہے دہشت گردی کی وجہ سے کئی گھر اجڑے، بچے یتیم ہوئے تو خاندان بے آسرا بھی ہوئے، جبکہ بہت سے لوگ معذور بھی ہوئے ہیں، بہتر ہوتا کہ یہ بھی بتا دیا جاتا اس سلسلے میں عالمی برادری نے پاکستان کا کیا خیال رکھا اور کتنی مدد کی،کیونکہ کہا تو یہی جاتا ہے کہ نقصان کے مقابلے میں امداد بہت ہی کم ملی ہے، جبکہ مطالبہ ڈو مور کا کیا جاتا رہا ہے۔اب وزیرستان اور خیبرایجنسی میں پاک فوج دہشت گردوں سے نبرد آزما ہے اور بڑی حد تک ان کی طاقت ختم کر کے90فیصد علاقہ کلیئر کرا لیا گیا اور اس عزم کا بھی اعادہ کیا گیا ہے کہ دہشت گردی ختم کر کے دم لیا جائے گا۔ ہم تو دُعاگو ہیں کہ اللہ تعالیٰ مسلمانوں کو ہدایت عطا فرمائیں اور یہ اپنے مسلمان بھائیوں کا خون بہانے سے باز آ جائیں۔

مزید : اداریہ