پنجاب یونیورسٹی اورینٹل کالج کے زیر اہتمام سید ہجویر تصوف سیمینار کا انعقاد

پنجاب یونیورسٹی اورینٹل کالج کے زیر اہتمام سید ہجویر تصوف سیمینار کا انعقاد

  



لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)صوبائی وزیر مذہبی امور و اوقاف میاں عطاءمحمد مانیکا نے کہا کہ معاشرے میں بہتری کے لئے صوفیاءکرام کی تعلیمات سے فائدہ اٹھایا جا سکتا ہے اس سلسلے میں ہمیں صوفیاءکرام کی لکھی کتب سے استفادہ کرنا چاہے ۔اس موقع پر انہوں نے داتا دربار سے متصل مدرسہ میں حضرت علی ہجویری ؒ کی معروف تصنیف کشف الحجوب کی جلد باقاعدہ تدریس شروع کرانے کا اعلان کیا۔ان خیالات کا اظہار انہو ں نے پنجاب یونیورسٹی اورینٹل کالج کے زیر اہتمام محکمہ اوقاف و مذہبی امور حکومت پنجاب کے اشتراک سے شیرانی ہال میں منعقدہ سید ہجویر تصوف سیمینار میں خطاب کرتے ہوئے کیا۔قائمقام وائس چانسلرپنجاب یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر محمد احسان ملک ، سیکریٹری اوقاف محمد حسن رضوی، ڈین / پرنسپل اورینٹل کالج پروفیسرڈاکٹر عصمت اللہ زاہد، ڈاکٹر ظہور احمد اظہر، ڈاکٹر محمد اکرم اکرام شاہ، ڈاکٹرغلام معین الدین نظامی، ڈاکٹر سید قمر علی زیدی،مفتی محمد ریاض سیالوی،ڈاکٹر محمد سلطان شاہ، سید محمد سرور چشتی، میاں سلیم اللہ اویسی، فیکلٹی ممبران اور طلباءطالبات کی بڑی تعدادبھی موقع پر موجود تھی۔

اپنے خطاب میں قائمقام وائس چانسلرپنجاب یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر محمد احسان ملک نے کہا ہے کہ ہمیں کسی مائنڈ سیٹ کے ساتھ نہیں بلکہ مائنڈ کو درست کرنے کے لئے مطالعہ کرنا چاہئے اورزبان و دل کی مماثلت کے بغیر مسائل حل نہیں ہوسکتے ۔انہوں نے کہا کہ ہمیں صوفیاءکرام کی دین کے لئے خدمات کے صلہ میں ان کی تعلیمات پر عمل کرنا چاہئے اور اہلِ دانش کو اپنے کہے پر عمل کرنا چاہیے۔ ظہور احمد اظہر نے اپنے کلیدی مقالے میںحضرت علی ہجویری ؒ کو مرشد ِ لاہور قراردیا جنہوں نے اس شہر کو دین اسلام سے روشناس کرایا۔ انہوں نے کہا کہ مسلمان تصوف کے بارے میں تفریق کا شکار ہیں جبکہ ہمارے صوفیاءکرام رسول اکرم ﷺ کی سنت و پیروی کو تصوف مانتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تصوف سوائے کتاب و سنت پر عمل کے کچھ بھی نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ حضرت علی ہجویری ؒ نے اپنی تعلیمات کے ذریعے اس سرزمین کے لوگوں کا مقدر بدل دیا انہوں نے اسلام کا جو بیج برسوں پہلے لگایا تھا وہ آج پھل دار درخت بن چکا ہے۔ سید قمر علی زید ی نے کہا کہ ہمیں کشف الحجوب کا مطالعہ کرنا چاہئے کیونکہ اس کتاب میں زندگی کے کئی اصول وضع کئے گئے ہیں۔ ڈاکٹر معین نظامی نے کہا کہ کشف المحجوب فارسی زبان میں تصوف کی پہلی کتاب ہے۔ سیداکرم اکرام شاہ نے کہا کہ صوفیاءکرام نے فلاح انسانیت کے لئے بہت کام کیا اور ہمیں ان کی قدر کرنی چاہئے۔ ڈاکٹرمحمد سلطان شاہ نے کہا کہ برصغیر کے حوالے سے صوفیاءکرام کا کردار منفردہے آج ان کی دینی و علمی خدمات کو منظر عام پر لانے کی ضرورت ہے تاکہ مسلم امہ کو درپیش مسائل اور چیلنجزکا مقابلہ کیا جاسکے ۔  

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...