مسلم لیگ(ن) کے کارکنوں کاپی ٹی آئی کے سامنے آنادرست نہیں تھا،ثمینہ گھرکی

مسلم لیگ(ن) کے کارکنوں کاپی ٹی آئی کے سامنے آنادرست نہیں تھا،ثمینہ گھرکی

  



لاہور( نمائندہ خصوصی) پیپلز پارٹی لاہور کی صدر ثمینہ خالد گھرکی نے کہا ہے کہ حکومت نے اپنے کارکنوں کو مخالف جماعت کے آمنے سامنے آنے کا موقع فراہم کیا انہوں نے کہا کہ انکی حکمت عملی بالکل غلط تھی اور جسکی ماڈل ٹاؤن کے واقعہ کی طرح سارے ملک میں مذمت کی جائے گی ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی سب سے زیادہ توجہ حالات کو ٹھیک کرنے پر مرکوز ہونی چاہیے

کیونکہ حکومتی حلقوں کی طرف سے محاذآرائی کو ہوا دینا سب سے بڑی حماقت ہے۔ ثمینہ خالد گھرکی نے افسوس سے کہا کہ حکومت نے ماضی کی غلطیوں سے سیکھنے کی بجائے انکے اعادہ کرنے کے حق میں زیادہ نظر آتی ہے جو اپنے پاؤں پر کلہاڑی مارنے کے مترادف ہے اور اس کی ہم شدید الفاظ میں مذمت بھی کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کو پارلیمنٹ اور عدالت کے ذریعے اپنی شکایات کا ازالہ کرنے کے لیے رجوع کرنا چاہیے اور احتجاج کی سیاست کو ختم کرکے مذاکرت کی طرف واپس جانا چاہئے اسی میں اس کی بہتری ہے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1