خونریزی کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے،شجاعت ، پرویزالٰہی

خونریزی کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے،شجاعت ، پرویزالٰہی

  



لاہور/اسلام آباد(جنرل رپورٹر)مسلم لیگ ق کے صدر شجاعت حسین اور سینئرمرکزی رہنما پرویزالٰہی نے کہا ہے کہ سانحہ ماڈل ٹاﺅن کے قاتلوں کو سزا مل جاتی تو پیر کو فیصل آباد میں بھی بیگناہوں کا خون نہ بہتا۔ انہوں نے فیصل آباد میں تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کے احتجاج کے موقع پر تشدد اور فائرنگ کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کو ماڈل ٹاﺅن لاہور کا سانحہ وہاں دہرانا نہیں چاہئے تھا، فیصل آباد میں تشدد اور خونریزی کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے، اپنی شکایات کے ازالہ کیلئے مظاہرہ کرنے والوں پر حکمران جماعت کا حملہ نہایت افسوسناک ہے، حالانکہ پیپلزپارٹی کے دور میں ن لیگ کے قائدین تحریک نجات چلا کر خود ا حتجاج کرتے رہے ہیں لیکن پیپلزپارٹی والوں نے تو ان پر حملے نہیں کیے تھے، گونواز، شہبازگو کے نعروں سے بوکھلائے ہوئے حکمران اس قسم کے ہتھکنڈوں سے اپنے اقتدار کو طول نہیں دے سکتے، بیگناہوں کا خون رنگ لا کر رہے گا، دن رات جمہوریت کا راگ الاپنے اور دوسروں کو جمہوریت کا درس دینے والے سیاسی مخالفین کو پرامن احتجاج کا حق دینے کو بھی تیار نہیں اور نہتے لوگوں پر گولیاں برسا کر جمہوریت زندہ باد کی بات کی جاتی ہے، ملک و قوم اور جمہوریت کے ساتھ اس سے بڑا مذاق نہیں ہو سکتا۔ مسلم لیگی قائدین نے کہا کہ جمہوریت کا اولین اصول تو برداشت اور رواداری ہے اور ن لیگ کی قیادت میں یہ جذبہ سرے سے موجود نہیں، وہ سینہ زوری، غنڈہ گردی اور طاقت کے استعمال کو تمام مسائل کا حل سمجھتے ہیں جس کا مظاہرہ انہوں نے مخالف سیاسی کارکنوں کے خلاف ہمیشہ اور ہر موقع پر کیا ہے لیکن اس طرح مسائل حل نہیں ہوتے۔ انہوں نے کہا کہ یہ کیسی حکومت ہے جو خود حالات خراب کرتی ہے اور الزام دوسروں کو دیتی ہے۔

مزید : صفحہ اول


loading...