نیب پنجاب نے سال 2014ءمیں 1376 ملین روپے کی ریکوری

نیب پنجاب نے سال 2014ءمیں 1376 ملین روپے کی ریکوری

  



لاہور ( خبرنگار) قومی احتساب بیورو ( نیب) پنجاب نے سال 2014ءمیں سرکاری محکموں کے کرپٹ افسران ، ملازمین، معاشرے کے سادہ لو افراد سے لوٹ مار کرنے والے نجی اداروں کے مالکان اور دیگر ذمہ داروں کے خلاف بلاخوف احتساب کا عمل شروع کر رکھا ہے، جس میں نیب پنجاب نے سال 2014ءمیں کرپشن ، بدعنوانی اور لوٹ مار میں ملوث ملزمان سے 1376 ملین روپے کی ریکوری کی ہے جس میں 167 انکوائریوں کو حتمی شکل دے دی گئی ہے جبکہ 80 سے زائد ریفرنس تیار کر کے عدالت میں پیش کر دئیے گئے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار نیب پنجاب کے ڈائریکٹر عتیق الرحمن خان نے نیب کی سالانہ کارکردگی اور کرپشن کے خلاف جاری مہم میں ریلی کے موقع پر صحافیوں سے بات چیت کے دوران کیا ہے۔ اس موقع پر نیب پنجاب کے ڈائریکٹر عتیق الرحمن خان نے کہا کہ ڈائریکٹر جنرل نیب پنجاب محمد حسنین کے حکم پر معاشرے سے کرپشن اور بدعنوانی کے خاتمے کے لئے بلا خوف احتساب کا عمل جاری ہے۔ انہوں نے بتایا کہ سال 2014ءمیں نیب کو 5031 درخواستیں موصول ہوئی ہیں جن میں سے 515 درخواسستوں کی ویری فیکیشن کی گئی جبکہ 700 سے زائد درخواستوں پر کارروائی کی گئی ہے جن میں 80 سے زائد ریفرنس تیار کئے گئے ہیں جس میں کرپٹ اور بدعنوان ملزمان سے 1376 ملین کی ریکوری کی گئی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ نجی اداروں میں سادہ لوح افراد سے لوٹ مار کرنے والے اداروں کے مالکان اور ملازمین کے خلاف کارروائی کر کے 167 انکوائریاں فائنل کر لی گئی ہیں جن کے ریفرنس تیار کیے جا رہے ہیں اور ریفرنس تیار کر کے جلد ملزمان کو گرفتار کر لیا جائے گا۔

نےب

مزید : صفحہ آخر


loading...