نوازشریف سے اسحق ڈار کی ملاقات پی آئی اے کے نئے صدارتی آرڈیننس کے بارے میںآگاہ کیا

نوازشریف سے اسحق ڈار کی ملاقات پی آئی اے کے نئے صدارتی آرڈیننس کے بارے ...

اسلام آباد(آن لائن)وزیراعظم میاں نوازشریف سے وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے ملاقات جس میں انہوں نے وزیراعظم کو پی آئی کے نئے صدارتی آرڈیننس سے آگاہ کیا ، دونوں رہنماؤں کے درمیان ملکی معیشت سمیت دیگر امور پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا ۔اس موقع پر اسحاق ڈار نے وزیراعظم کوپی آئی اے کے نئے صدارتی آرڈیننس بارے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ پی آئی اے کے نئے آرڈیننس کے تحت تمام ملازمین کی نوکریوں کو مکمل تحفظ حاصل ہو گا۔ کسی بھی ملازم کو نوکری سے برخاست نہیں کیا جائے گا۔اسلام آباد میں وزیر اعظم نواز شریف سے وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے ملاقات کی۔ اسحاق ڈار نے وزیر اعظم کو پی آئی اے کے نئے صدارتی آرڈیننس پر بریف کیا۔ وفاقی وزیر خزانہ نے کہا کہ نئےآرڈیننس کے تحت تمام ملازمین کی نوکریوں کو مکمل تحفظ حاصل ہو گا۔پی آئی اے کو بیوکریٹک انداز کے بجائے پبلک لمیٹڈ کمپنی کی طرز پر چلایا جائے گا۔ پی آئی اے کے لئے او جی ڈی سی ایل کے کارپوریٹ ماڈل کو نافذ کیا جائے گا۔ کسی بھی ملازم کو نوکری سے برخاست نہیں کیا جائے گا۔اسحاق ڈار نے آپریشن ضرب عضب میں بے گھر ہونے والے متاثرین کی بحالی کے امور پر بھی وزیر اعظم کو بریفنگ دی۔ اسحاق ڈار نے کہا کہ آئی ڈی پیز نے آپریشن ضرب عضب کو کامیاب بنانے کے لئے بڑی قربانیاں دی ہیں۔وزیر اعظم نے تمام متاثرین کی بحالی اور دوبارہآباد کاری کے لئے تمام وسائل بروئے کار لانے کی ہدایت کی۔ اسحاق ڈار نے مزید کہا کہ نئے 40 ارب روپے کے ٹیکسز کی وصولی پر تعیش اشیاء پر ریگولٹری ڈیوٹی کیذریعے حاصل کی جائیں گی۔27 ارب روپے صوبوں کے لئے مختص کئے جائیں گے۔ذرائع کے مطابق وزیراعظم نوازشریف اور اسحاق ڈار کے درمیان ملکی معیشت کے حوالے سے بھی بات چیت کی گئی ہے ۔دونوں رہنماؤں نے ملکی موجودہ سیاسی صورتحال بھی تبادلہ خیال کیا

مزید : صفحہ اول