ایف بی آر کا لگژری گاڑیوں کے ٹوکن ٹیکس نادہند گان کے خلاف کاروائی کا فیصلہ

ایف بی آر کا لگژری گاڑیوں کے ٹوکن ٹیکس نادہند گان کے خلاف کاروائی کا فیصلہ

 لاہور (اسد اقبال) ایف بی آر نے نئے سال کے آغاز سے لگژری گاڑیوں کے ٹو کن ٹیکس نادہندگان کے خلاف کارروائی کا فیصلہ کر لیاہے ، پہلے مر حلے میں ٹیکس چوروں کے اکاؤ نٹ منجمد کر دئے جائیں گے۔ ایف بی آر ذرائع کے مطابق یکم جنوری سے لگژری گاڑیوں کے ایسے نادہند مالکان کے خلاف کارروائی کی جائے گی جنھوں نے گزشتہ دو سال سے گاڑی فروخت اور ادائیگی کے وقت ڈیو ٹی اورٹو کن ٹیکس ادا نہیں کیا ۔پہلے مرحلے میں ایسے افرادکے اکاؤ نٹس منجمد کیے جائیں گے جن کے پاس نیشنل ٹیکس نمبر مو جو د نہیں ہو گا۔ اس اقدام سے پہلے نادہندگان کو نو ٹس بھی جاری کئے جائیں گے ۔ادارہ شماریات رپورٹ کے مطابق رواں مالی سال اکتو بر تک 14106لگژری گاڑیاں درآمد کی گئیں اور صر ف اکتو بر میں یہ تعداد 4041رہی ۔دوسری طر ف ایف بی آر نے رواں مالی سال ٹیکس وصو لی کا ہدف حاصل کر نے کے لیے تمام کلکٹرز کو ہدایات دی ہیں کہ ہر صورت ٹیکس وصولی یقینی بنائی جائے اور اس کے لیے تمام قانونی اقدامات بروئے کار لائیں جائیں۔لاہور کار ڈیلر فیڈریشن کے صدر شہزادہ سلیم خان کا کہنا ہے کہ ایف بی آر کے اہلکار ٹیکس کے حصول کے لیے شہریوں کی تضحیک کرتے اور غلط رویے سے پیش آتے ہیں جس کی ہم مذمت کر تے ہیں ۔انھوں نے کہا کہ جو شخص لاکھوں روپے کی گاڑی خریدتا ہے اسے چند ہزار روپے ٹیکس دینے میں کو ئی دقت نہیں لہذا لگژری گاڑیوں کے مالکان ٹیکسز کی ادائیگی کو پہلی تر جیح رکھتے ہیں ۔ شہزادہ سلیم خان نے کہا کہ ایف بی آر ٹیکس ریو نیوکو بڑھانے کے لیے ٹیکس نظام میں اصلاحات لاتے ہوئے آسانیاں پیدا کر ے تاکہ نادہندگان بھی ٹیکس نیٹ کا حصہ بن سکیں۔

ٹیکس نادہندگان

مزید : صفحہ آخر