پی آئی اے نجکاری معاملہ، پارلیمانی کمیٹی کے قیام سے قبل حکومتی اور اپوزیشن اراکین الجھ گئے

پی آئی اے نجکاری معاملہ، پارلیمانی کمیٹی کے قیام سے قبل حکومتی اور اپوزیشن ...
پی آئی اے نجکاری معاملہ، پارلیمانی کمیٹی کے قیام سے قبل حکومتی اور اپوزیشن اراکین الجھ گئے

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پی آئی اے کی نجکاری کیلئے پارلیمانی کمیٹی کے قیام سے پہلے ہی وفاقی وزیر خزانہ نے اسمبلی میں تقریر کر کے اپوزیشن اراکین کو الجھا دیا ہے۔ اپوزیشن جماعتوں کا کہنا ہے اسحاق ڈار جو اسمبلی میں کہہ رہے ہیں، مذاکرات میں ایسا کچھ بھی نہیں کہا گیا۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے قومی اسمبلی میں تقریر کرتے ہوئے کہا کہ حکومت پی آئی اے کے 26 فیصد حصص فروخت کر رہے ہے اور اس معاملے پر جس پارلیمانی کمیٹی کے قیام کا فیصلہ ہوا ہے وہ صرف 26 فیصد شیئرز سے متعلق معاملات ہی دیکھے گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس کمیٹی میں پی آئی اے ملازمین کے نمائندوں کو بھی شامل کرنے کا فیصلہ نہیں کیا گیا ہے۔

وزیر خزانہ کے بیان پر اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا کہ سپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق کے چیمبر میں ہونے والے مذاکرات میں یہ بات نہیں ہوئی تھی کہ پارلیمانی کمیٹی صرف 26 فیصد شیئرز کے معاملات کو دیکھے گی ۔

مزید :

اسلام آباد -اہم خبریں -