موت کی سزا پانے والے 3ملزمان کی سزا عمر قید میں تبدیل

موت کی سزا پانے والے 3ملزمان کی سزا عمر قید میں تبدیل

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(نامہ نگار)سیشن کورٹ سے موت کی سزا پانے والے 3ملزمان کی سزا ے موت کو عمر قید میں تبدیل کردیا جبکہ منشیات کے ملزم کوعمر قید کی سزا کو ایک سال قید میں تبدیل کرنے کا حکم جاری کردیا ہے،سیشن جج نے عدالت عالیہ کے احکامات سے کوٹ لکھپت جیل کو آگاہ کردیاہے۔سیشن کورٹ سے شرافت علی کو ایڈیشنل سیشن جج وسیم الرحمن نے 2013ء میں علی کو قتل کرنے کے جرم میں سزائے موت کی سزا دی جس کے بعد مجرم نے لاہور ہائی کورٹ میں اپیل دائر کی جو عدالت نے منظور کرتے ہوئے اس کی سزا کو عمرقید میں تبدیل کردیا ،مجرم کے خلاف تھانہ ہربنس پورہ پولیس نے 2007ء میں مقدمہ درج کیا تھا،اسی طرح سیشن کورٹ نے محمد اعظم کو 2013ء میں سزائے موت دی۔
اس کے خلاف تھانہ گلبرگ پولیس نے بھولا نامی شخص کو قتل کرنے پر 2007ء میں مقدمہ درج کیا تھا ملزم نے لاہور ہائی کورٹ میں اپیل کی جس کو عمر قید میں تبدیل کردیا گیا،اسی طرح سیشن کورٹ نے قادر نامی مجرم کو 2013ء میں سزائے موت دی اس پر مانگامنڈی کے اللہ دتہ کو قتل کرنے کا الزام تھا۔
ملزم کے خلاف مانگامنڈی نے مقدمہ درج کیا لاہور ہائی کورٹ نے اس کی سزا کو بھی عمر قیدمیں تبدیل کردیاہے۔ اسی طرح منشیات کیس میں سیشن کورٹ نے مجرم فیض رسول کو 2016ء میں عمرقید کی سزا دی جس کو لاہور ہائی کورٹ نے ایک سال قید میں تبدیل کردیا مجرم کے خلاف تھانہ شفیق آباد پولیس نے مقدمہ درج کیا تھا۔