روس نے صدارتی انتخابات کے ووٹنگ سسٹم کو ’’سکین‘‘ کیا،امریکہ کا الزام

روس نے صدارتی انتخابات کے ووٹنگ سسٹم کو ’’سکین‘‘ کیا،امریکہ کا الزام

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

واشنگٹن (اظہر زمان، بیوروچیف) امریکی ہوم لینڈ سکیورٹی حکام نے الزام لگایا ہے کہ روس کے صدارتی انتخابات میں ووٹوں کے ڈیٹا بیس اور کمپیوٹر کے ووٹنگ سسٹم کو ’’سکین‘‘ کرنے کے ان کے پاس واضح ثبوت ہیں۔ ’’واشنگٹن پوسٹ‘‘ نے اپنی تازہ اشاعت میں ان حکام کے حوالے سے ایک رپورٹ جاری کی ہے۔ قبل ازیں ڈیمو کریٹک صدارتی امیدوار ہیلری کلنٹن اپنی انتخابی مہم میں یہ الزام لگاتی رہی ہیں کہ روس انتخابات میں مداخلت کر رہا ہے۔ اس دوران ڈیمو کریٹک پارٹی کے ایک لیڈر اور سابق صدارتی امیدوار سینیٹر لنڈسے گراہم نے ایک قدم اور آگے بڑھتے ہوئے کہا ہے کہ وہ امریکہ کے صدارتی انتخابات میں روسی مداخلت کی تحقیقات کی خود قیادت کریں گے اور روسی صدر پیوٹن نے اپنے منفی کردار کی بھاری قیمت ادا کرنی پڑے گی۔ مسٹر گراہم نے ’’سی این این‘‘ ٹی وی کو ایک تازہ انٹرویو میں بتایا ہے کہ اوبامہ کی کمزور انتظامیہ نے اس سلسلے میں شک و شبہات موجود ہونے کے باوجود ٹھوس اقدام نہیں کئے۔انہوں نے کہا کہ انہیں یقین ہے کہ روس نے ڈونلڈ ٹرمپ کو جتانے کیلئے انتخابی سسٹم میں مداخلت کی ہے۔ اوبامہ انتظامیہ نے روس کی طرف سے ڈیمو کریٹک نیشنل کمیٹی کی خفیہ ای میل کو ’’ہیک‘‘ کرنے کا ابھی الزام لگایا تھا، جس میں کمیٹی پر الزام آیا تھا کہ وہ اندرون خانہ ہیلری کلنٹن کو نامزد کرانے کی راہ ہموار کر رہی ہے جس پر چیئرپرسن کو مستعفی ہونا پڑا تھا۔
انتخابات،سکین

مزید :

صفحہ اول -