اسلامی نظریاتی کونسل نے سندھ اسمبلی سے منظور مذہب کی تبدیلی کے بارے میں بل مسترد کر دیا

اسلامی نظریاتی کونسل نے سندھ اسمبلی سے منظور مذہب کی تبدیلی کے بارے میں بل ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 اسلام آباد (آئی این پی)اسلامی نظریاتی کونسل نے سندھ اسمبلی کے کم عمری میں مذہب کی تبدیلی کے حوالے سے منظور کیے گئے بل کوآئین پاکستان سے متصادم قرار دیتے مسترد کردیا، گورنر سندھ کو قرارداد کی کاپی سمیت خط لکھنے کا فیصلہ، سینٹ کی انسانی حقوق کمیٹی میں ناموس رسالت کے قانون میں ترامیم زیر بحث لانے کے خلاف قرارداد سمیت مولانا شیرانی کی بحیثیت چیئرمین کارکردگی پر خراج تحسین اور کونسل کی شفارشات کو پارلیمنٹ زیر بحث لانے کی چار قراردادیں اتفاق رائے سے منظور،حویلیاں طیارہ حادثہ کے شہداء کیلئے فاتحہ خوانی بھی کی گئی ، مولانا شیرانی نے کہا کہ سندھ اسمبلی سمیت پاکستان کی کسی بھی اسمبلی کو قرآن وسنت اورآئین کے خلاف قانون سازی کا اختیار نہیں ۔جمعرات کو مولا نا شیرانی کا بحیثیت چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل کے الوداعی اجلاس سے خطاب اور میڈیا سے بات چیت، اجلاس کے بعد میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے مولانا شیرانی نے کہاکہ گزشتہ روز حویلیاں میں ہونیوالا طیارہ حادثہ قومی سانحہ ، کونسل اجلاس میں جاں بحق افراد کیلئے فاتحہ خوانی بھی کی گئی۔ انہون نے کہا کہ دوران اجلاس سندھ اسمبلی سے اقلیتی بل منظور ہونے کا معاملہ زیر بحث آیا جس پر کونسل نے مسترد کرتے ہوئے متفقہ قرارداد منظور کی اور گورنر سندھ کو معاملے پر خط لکھنے کا فیصلہ کیاہے۔ مولانا محمد خان شیرانی نے ایک اور سوال پر کہاکہ جب تک ورلڈ بینک قائم ہے اس وقت تک سود کی لعنت سے چھٹکارا نہیں پایا جاسکتا، اس حوالے سے باتیں تو خوش آئند ہیں لیکن عملی میدان میں مشکلات ہیں ۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ناموس رسالت قانون پر نظر ثانی بارے سینیٹ کی انسانی حقوق کمیٹی کیخلاف بھی قرارداد منظور کی، مسلمہ عمل کو دوبارہ زیر بحث لانا احسن نہیں جبکہ قائد اعظم یونیورسٹی کے شعبہ فزکس کو دوسرے نام سے منسوب کرنا بھی قابل تحسین نہیں ، اس حوالے سے وزیر اعظم کو خط لکھیں گے،چوتھی قرارداد میں مطالبہ کیا ہے کہ. اسلامی نظریاتی کونسل کی سفارشات پارلیمنٹ میں پیش ہوں،اسلامی نظریاتی کونسل کی سفارش اتنے لئے پارلیمنٹ میں بحث کیلئے دن مقرر کئے جائیں،اسلامی نظریاتی کونسل کی سفارشات پر آئین اور قانون کے مطابق عمل کیا جائے،اس حوالے سے بھی وفاقی حکومت کو خط لکھیں گے۔ترکی کے ادارے دیانت کے سربراہ گورموس کل اسلامی نظریاتی کونسل کا دورہ کریں گے، سود کے خاتمے کی باتیں اچھی ہیں،اپنے دور میں کامیابیوں و ناکامیوں بارے سوال کا جواب صرف ایک شعر میں دیا-قبل ازیں الودعائی اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے مولانا شیرانی نے کہا کہ مفتی امداد اللہ اور علامہ افتخار نقوی کی کتب پایہ تکمیل تک پہنچ گئی ہیں ائندہ چئرمین شپ کا امید وار نہیں ہوں۔ انسانیت کی بنیاد وحدت ہے، ہر ایک کو اپنا راے پر عمل کرنے کا حق دیں.کائنات انسان اور روح پر جدید اور قدیم علوم پر یونیورسٹی قائم کرنے کا ارادہ ہے۔ہوا پرستی کی بجایے خدا پرستی پر مشتمل مذاہب کے علوم پڑھائے جایں گے،مولانافضل الرحمن سے کہا ہے کہ وزیر اعظم سے کہں کہ وہ ممبران کا تقرر کریں، میری خواہش ہے کہ ایک دوسرے کی رائے کا خیال رکھا جائے،زندگی میں کبھی میری ضرورت پڑی تو حاضر ہوں گا،اس موقع پراسلامی نظریاتی کونسل کے اراکین کی جانب سے چیرمین مولانا محمد خان شیرانی کی بحثیت چیرمین کارکردگی سے متعلق قرارداداتفاق رائے سے منطور کر لی گئی قرارداد میں مولانا محمد خان شیرانی کی بحثیت چیرمین کارکردگی کی تعریف کی گئی اور کہا گیا کہ ہماری دعا ہے کہ جو بھی نیا چیرمین بنے اوہ راست گواور حق پرست ہو

اسلامی نظریاتی کونسل

مزید :

صفحہ اول -