عمران خان وزارت عظمٰی کے حصول کیلئے خیبر پختونخوا کو قربانی کا بکرا بنا رہے ہیں ، حیدر ہوتی

عمران خان وزارت عظمٰی کے حصول کیلئے خیبر پختونخوا کو قربانی کا بکرا بنا رہے ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 تخت بھائی(نامہ نگار) خیبر پختونخواہ کے سابق وزیر اعلیٰ اور عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے کہا ہے کہ تحریک انصاف کے قائد عمران خان وزارت عظمیٰ کے حصول اور پنجاب کو فتح کرنے کے لیے خیبر پختونخواہ کو قربانی کا بکرا بنا رہے ہیں۔ کپتان خان کی ہٹ دھرمی اور وزیر اعلیٰ پرویز خٹک کی نا اہلی کے باعث صوبہ اور پختون قوم اپنے حقوق سے محروم ہو گئی ہے اور وزیر اعظم نواز شریف کو کشکول کے طعنے دینے والے آج خود بیرونی اداروں سے قرضے کے حصول کے لیے کشکول لیے پھر رہے ہیں۔ 2018 ؁ء کے عام انتخابات میں پختون قوم سیاسی شعور اور پختگی کا ثبوت دے کر اے این پی کو کامیابی دلائیگی۔ وہ تخت بھائی کے علاقہ ساڑو شاہ (میدان آباد)میں ایک بہت بڑے شمولیتی جلسے سے خطاب کر رہے تھے جس سے ضلعی ناظم اور اے این پی ضلع مردان کے صدر حمایت اللہ مایارایڈوکیٹ، سابقہ ایم پی اے شیر افغان خان، ضلعی جنرل سیکرٹری حاجی لطیف الرحمان اور ضلعی نائب صدر محمد ایوب یوسفزئی نے بھی خطاب کیا۔ اے این پی ضلع مردان کے جائنٹ سیکرٹری جواد خان ٹکر، سابقہ ضلع صدر فاروق اکرم، ملگری تنظیموں کے ڈسٹرکٹ کوارڈینیٹر میاں طاہر ایڈوکیٹ، تحصیل تخت بھائی کے جنرل سیکرٹری حاجی عطاء اللہ خان، جائنٹ سیکرٹری سعید خان دیروی، تحصیل کونسلر ذولفقار علی بھٹو، ظہور حسین مہمند، لعل گل یوسفزئی اور ملگری بابوگان ضلع مردان کے صدر حاجی ارشد حسین بھی اس موقع پر موجود تھے۔ اس موقع پر علاقہ کے ممتاز سماجی و سیاسی شخصیات حاجی جمیل خان اور حاجی داؤد خان نے اپنے خاندان اور سینکڑوں ساتھیوں سمیت پیپلز پارٹی سے مستعفی ہو کر اے این پی میں شمولیت کا اعلان کیا۔ امیر حیدر خان ہوتی نے کہا کہ وقت کا تقاضہ ہے کہ قبائل علاقوں کو صوبہ خیبر پختونخواہ میں ضم کیا جائے اور بعد ازاں مردم شماری کرائی جائے اور انہیں ظالمانہ فرسودہ قوانین سے نجات دلا کر بنیادی حقوق دیئے جائیں ۔ انہوں نے کہا سی پیک منصوبہ صرف پنجاب کو نوازنے کے لیے ہیں اور ہمارے صوبے کو اس کے ثمران سے محروم کر دیا گیا ہے جو کہ مرکزی حکومت اور بڑے بھائی پنجاب کی سازش ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے اپنے دور حکومت میں سینکڑو منصوبوں کے علاوہ مرکز سے صوبے کا حق چھین کر صوبے کو ترقی کی راہ پر گامزن کیا لیکن پی ٹی آئی کی نا اہل حکومت نے صوبے کو محرومی کے سوا کچھ نہیں دیا اور مرکز نے صوبے کے تمام حقوق دبا رکھے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان تخت اسلام آباد کے حصول کے لیے صوبے اور عوام کو قربانی کا بکرا بنا رہے ہیں اور پنجاب کو فتح کرنے کے لیے صوبہ خیبر پختونخواہ کے عوام کو ایندھن بنا رہے ہیں۔پختون قوم اب بیدار ہو چکی ہے اور 2018 ؁ء کے عام انتخابات میں ذہنی پختگی اور سیاسی شعور کے مطابق اے این پی کو کامیابی دلا کر صوبے کو ترقی کی راہ پر گامزن کرے گی۔ جبکہ پی ٹی آئی کے ہاتھوں اپنی نوجوان نسل کو ہم مزید برباد نہیں ہونے دینگے۔