عمران خان سپریم کورٹ میں دلائل دینے کی بجائے کمیشن کے بائیکاٹ کی دھمکیاں دے رہے ہیں:پرویز رشید

عمران خان سپریم کورٹ میں دلائل دینے کی بجائے کمیشن کے بائیکاٹ کی دھمکیاں دے ...
عمران خان سپریم کورٹ میں دلائل دینے کی بجائے کمیشن کے بائیکاٹ کی دھمکیاں دے رہے ہیں:پرویز رشید

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سینیٹر پرویز رشید نے کہاہے کہ عمران خان سپریم کورٹ میں دلائل دینے کی بجائے دھمکیاں دے رہے ہیں،انہوں نے سپریم کورٹ کو دھمکی دی کہ کمیشن بنایا گیا تو بائیکاٹ کریں گے،عمران خان وزیراعظم پر لگائے گئے الزامات کے دفاع میں کوئی ثبوت پیش نہیں کر سکے،کمیشن بنانے کا مطالبہ خود عمران خان کا تھا،اب وہ بائیکاٹ کا اعلان کر رہے ہیں، عمران خان وزیراعظم پر جھوٹے الزامات اور استعفے کا مطالبہ کر رہے ہیں ،استعفا تو دور کی بات ہے ہم تو وزیراعظم کی شیروانی کا ٹوٹا ہوا بٹن بھی دینے کو تیار نہیں۔
نیوزکانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کے رہنما اور سینیٹر پرویز رشید نے کہاہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے خود کمیشن کے قیام کا مطالبہ کیا اور اب کمیشن کے مطالبے سے انحراف کر کے عمران خان نے اپنی عادت کے مطابق یوٹرن لیا ،عمران خان سپریم کورٹ میں دلائل دینے کی بجائے دھمکیاں دے رہے ہیں ،انہوں نے سپریم کورٹ کو دھمکی دی کہ کمیشن بنایا گیا تو بائیکاٹ کریں گے ۔پرویز رشید کا کہناتھا کہ عمران خان نے سپریم کورٹ کی توہین کرنے کی کوشش کی ،سپریم کورٹ ایک آئینی ادارہ ہے ۔
پرویز رشید کا کہناتھا کہ عمران خان نے وزیراعظم نوازشریف پربدعنوان ،منی لانڈرنگ ،کمیشن اور ٹیکس چوری کے چار الزامات لگائے لیکن وہ اپنے الزامات کے دفاع میں کوئی ثبوت پیش نہیں کر سکے اور آج عمران خان نے اپنی عادت کے مطابق یوٹرن لے لیا،چیئرمین پی ٹی آئی کورٹ کی کارروائی کے بائیکاٹ کا اعلان کر نے کا کہہ رہے ہیں ۔ان کا کہناتھا کہ عمران خان ردی کا ایک ٹکڑا بھی پیش نہیں کر سکے جس کی بنیاد پر سوال پوچھا جاتا۔
سینیٹر پرویز رشید کا کہناتھا کہ کمیشن بنانے کا مطالبہ خود عمران خان کا تھا انہوں نے پٹیشن میں کمیشن بنانے کی درخواست کی اور اب وہ بائیکاٹ کا اعلان کر رہے ہیں ،انہوں نے اعلیٰ ترین ادارے کو بھی دھمکی دینے کا حربہ استعمال کیا۔عمران خان کا یہ رویہ انتہائی افسوسناک ہے ،وہ جمہوری نظام کو کمزور کر رہے ہیں ،عمران خان جھوٹ بولنے اور یوٹرن لینے کے عادی ہو چکے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ عمران خان وزیراعظم پر جھوٹے الزامات اور استعفے کا مطالبہ کر رہے ہیں ،استعفا تو دور کی بات ہے ہم تو وزیراعظم کی شیروانی کا ٹوٹا ہوا بٹن بھی دینے کو تیار نہیں ۔ان کا کہناتھا کہ عوام کے سات ماہ ہم نے ضائع نہیں کیے ہیں ،عمران خان کو چاہیے تھا کہ عدالت اور قوم کا وقت ضائع کرنے پر قوم کے سامنے شرمندگی کا اظہا ر کرتے ،ضمیر نام کی چیز ہوتی تو عدالت میں الزامات پر شرمندہ ہونے کا اعتراف کرتے ۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -