حکومت کے ہنی مون کے دن گزر گئے اب کام کرکے دکھاناہے،سراج الحق

حکومت کے ہنی مون کے دن گزر گئے اب کام کرکے دکھاناہے،سراج الحق
حکومت کے ہنی مون کے دن گزر گئے اب کام کرکے دکھاناہے،سراج الحق

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)امیر جماعت اسلامی سینٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ جب سے موجودہ حکومت آنے پر مہنگائی ہوئی ہے ہر آدمی پریشان ہے،حکومت نے جتنے اعلانات کئے اپنے عمل سے ثابت کردیا ہر اعلان صرف اعلان ہے۔

جماعت اسلامی کے زیراہتمام تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سراج الحق کا کہناتھا کہ حکومت نے یہی فتویٰ اور فلسفہ دیا کہ یوٹرن لینا ہی فلسفہ ہے ،وزرا آپس میں لڑ رہے ہیں ایک دوسرے کےخلاف بیانات دے رہے ہیں،امیر جماعت اسلامی نے کہا کہ حکومت کے ہنی مون کے دن گزر گئے اب آپ کو کام کر کے دکھاناہے،حکومت بتائے چار ماہ میں مدینہ کی ریاست کی طرف کون ساقدم اٹھایا،حکومت نے خود اعلان کیا کہ ان کےلئے مدینہ کی ماڈل ریاست ہے۔

ان کا کہناتھا کہ ہم نے ایجی ٹیشن کا فیصلہ ابھی نہیں کیا،لیکن قوم کی ترجمانی کریں گے ،حکومت کو اعلانات کے بجائے کر کے دکھاناہے، حکمران چین جاتے ہیں تو کہتے ہیں چائنا ماڈل بہت اچھا ہے،سراج الحق نے کہا کہ حکومت کو یکسوئی کی ضرورت ہے ،انہوںنے کہاکہ کراچی میں تجاوزات کے نام پر6ہزار مکان گرائے گئے،غیرآبادمقامات کو لیز پردیاگیا،لوگوں نے آباد کئے،آج گرادیے گئے،گونگے اور اندھے بن کر آپریشن کرنا انصاف نہیں ہے۔

ان کا کہناتھا کہ اس حکومت نے ریلیف دینے کا وعدہ کیا عمل نہیں کیا،حکومت آنے کے بعد مہنگائی بڑھی ہے،یوٹرن لینا یہی ان لوگوں کا فلسفہ ہے،امیرجماعت اسلامی نے کہا کہ چنے کی پلیٹ سے لےکر ہر چیز مہنگی ہوگئی ہے،کیا وجہ ہوگئی ہے کہ نارمل صورتحال میں ہر چیز مہنگی ہوگئی ہے،انہوںنے کہا کہ حکمرانوں کو فرق اس لیے نہیں پڑتا کیونکہ وہ جاگیردار اور سرمایہ دار ہیں،رحمت،برکت کے دروازے اس لیے بند ہورہے ہیں وزرا کی نیت ٹھیک نہیں۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /پنجاب /لاہور