مسجد الحرام کا توسیع 3مکمل ہو گا، 80فیصد کام پایہ تکمیل کو پہنچ چکا، پراجیکٹ ڈائریکٹر

مسجد الحرام کا توسیع 3مکمل ہو گا، 80فیصد کام پایہ تکمیل کو پہنچ چکا، پراجیکٹ ...

  

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)مسجد الحرام کا توسیعی منصوبہ تین سال میں مکمل ہوگا،مسجد الحرام کی انتظامیہ نے اعلان کیا ہے کہ حرم شریف کا توسیعی منصوبہ 1444ھ مطابق 2023ء میں مکمل ہو گا۔ مطاف اور شامیہ کے علاقے کی توسیع بھی مکمل کرلی جائے گی۔حرم انتظامیہ میں پروجیکٹ کے ڈائریکٹر عمار الاحمدی نے مکہ اخبار سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ حرم شریف کی تیسری سعودی توسیع کا 80فیصد کام مکمل کرلیا گیا ہے۔باقی ماندہ 20فیصد کام کا تعلق تزئین و آرائش سے ہے۔الاحمدی نے توجہ دلائی ہے کہ توسیعی منصوبے کے تحت باب ملک عبدالعزیز، باب اجیاد، الیکٹرو مکینک امور اور آرائشی چھتوں کے منصوبے شامل ہیں۔الاحمدی نے بتایا کہ تمام منصوبوں پر تعمیر کا نظام الاوقات بنا ہوا ہے اور اسی کے تحت کام ہورہا ہے۔ یہ منصوبہ پوری دنیا میں اپنی نوعیت کا منفرد ہے اور کسی رکاوٹ کے بغیر کام جاری ہے۔الاحمدی نے مزید کہا کہ توسیعی منصوبہ کئی مرحلوں پر مشتمل تھا۔پہلے مرحلے میں سابقہ عمارتیں منہدم کی گئیں۔دوسرے مرحلے میں منہدم شدہ مقامات کی صفائی کی گئی۔تیسرے مرحلے میں تعمیرات کا کام انجام دیا گیا۔ لاحمدی نے بتایا کہ توسیعی منصوبے کے تحت طہارت خانے، وضو خانے، الیکٹرانک زینے، لفٹیں، سی سی کیمرے سب شامل ہیں۔الاحمدی نے بتایا کہ مسجد الحرام کا توسیعی منصوبہ مکمل ہونے پر نمازیوں کے لیے گنجائش ایک لاکھ 97ہزار سے بڑھ کر 2لاکھ78ہزار تک پہنچ جائے گی۔ جہاں تک طہارت خانوں کا تعلق ہے تو ان کی تعداد 8.6ہزار سے بڑھ کر 12.4ہزار تک پہنچ جائے گی جبکہ وضو خانوں کی تعداد 2.2ہزار سے بڑھ کر 9.2ہزار تک ہوجائے گی۔ برقی زینے 275سے بڑھ کر 680ہوجائیں گے اور لفٹوں کی تعداد 10 سے بڑھ کر 143 تک ہوجائے گی۔

عمار الاحمدی 

مزید :

صفحہ آخر -