منشیات اور کرپشن کا خاتمہ اجتماعی ذمہ داری 

منشیات اور کرپشن کا خاتمہ اجتماعی ذمہ داری 
 منشیات اور کرپشن کا خاتمہ اجتماعی ذمہ داری 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 جناپ کپتان کا کہنا ہے کہ کرپشن  اور منشیات سے دولت کمانے والوں کی معاشرے میں عزت ہونا افسوسناک ہے، انھیں برا سمجھنا ہو گا،منشیات کا خاتمہ سب کی ذمہ داری ہے۔ یہ گفتگو جناب وزیرِ اعظم نے اے این ایف ہیڈ کوارٹر میں کی اور دیکھا جائیتو بات تو ٹھیک ہی ہے کہ کرپشن اور منشیات وہ ناسور ہیں جو ہمارے معاشرے کو دیمک کی طرح آہستہ آہستہ چاٹ  رہے ہیں اور سرکاری دفاتر کے علاوہ بے شمار جگہوں پرجائز کام بھی رشوت دئیے بغیر نہیں ہوتا۔ جی ہاں اور کرپشن کیخاتمے کی دعویدار  حکومت بھی تاحال رشوت ستانی  پرقابو پانے میں ناکام ہے۔ساتھ ہی اگر دیکھا جائے تو ملک بھر میں منشیات کا استعمال کرنے والوں میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے،نشے کے نت نئے طریقے متعارف کروائے جا رہے ہیں جن میں ہیروئن، افیم، چرس کے ساتھ ساتھ آئس کا نشہ بھی روز بروز نوجوان نسل میں مقبولیت حاصل کر رہا ہے، آئس کے متعلق کہا جاتا ہیکہ اس میں  وہی ایفیڈرین استعمال ہوتی ہے جس میں بڑے بڑے نام والوں کو سخت سزا بھی ہوئی اور آج کیدور میں یہ آئس  نوجوان نسل کو تباہ و برباد کر رہی ہے اور بتلا دیں کہ آئس اور کوکین  مہنگا نشہ ہے جسے زیادہ تر نوجوان لڑکے لڑکیاں استعمال کر رہے ہیں۔

جی ہاں انتہائی تشویش ناک خبر ہے کہ ملک بھر کیاسکول اور کالجز میں  طلبائکی بڑی تعداد منشیات کا استعمال کر رہی ہے اور تو اور خواتین  کی بڑی تعداد بھی نشے کی لت میں مبتلاہے۔حکومت اور حکومتی ادارے  یہ سب روکنے میں ناکام نظر آرہے ہیں جبکہ منشیات کا سدباب کرنے والے اداروں پرکروڑوں روپے ماہانہ خرچ کئے جا رہے ہیں، لیکن مذکورہ اداروں کی کارکردگی صفر ہے۔منشیات کے خاتمے کے لئے متعلقہ اداروں کو اپنی کارکردگی بہتر بنانی ہو گی  اور نوجوان نسل میں زہر فروخت کرنے والوں کیخلاف سخت کاروائی  بھی کرنی ہو گی تاکہ ہماری آئندہ آنے والی نسلیں اور ہم سب بھی منشیات کی لعنت سے چھٹکارا پانے میں کامیاب ہوں۔ تو بہر حال اجازت چاہتے ہیں آپ سے، دوستوں ملتے ہیں جلد ایک بریک کے بعد، تو چلتے چلتے اللہ نگھبان رب راکھا

مزید :

رائے -کالم -