ایف بی آر کے رئیل اسٹیٹ سیکٹرپر نئے ریٹس موخر نہیں ختم کئے جائیں 

ایف بی آر کے رئیل اسٹیٹ سیکٹرپر نئے ریٹس موخر نہیں ختم کئے جائیں 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور(میاں اشفاق انجم، تصاویر، ایوب بشیر)ایف بی آر کے نئے ریٹس موخر نہیں ختم کئے جائیں لالی پاپ نہیں چلے گا۔ رئیل اسٹیٹ سیکٹر اور تعمیراتی صنعت کو بچانے کیلئے ملک بھر کی کمیونٹی متحد ہے۔سٹیک ہولڈر کو اعتماد میں لئے بغیر مسلط کئے گئے ریٹس اگر نافذ ہو گئے تو کچھ نہیں بچے گا۔ 16 جنوری سے ٹیبلز ریٹس نافذ کرنے کے اعلان کو مسترد کرتے ہیں۔وزیراعظم اور وزیر خزانہ مداخلت کریں۔ ان خیالات کا اظہار لاہور ریلیٹرز ایسوسی ایشن کے صدر چودھری طاہر مسعود الخدمت گروپ کے چیئرمین میاں طلعت احمد فاؤنڈر گروپ کے چیئرمین حاجی لطیف فرینڈز بزنس گروپ کے چیئرمین چودھری خالد محمود، سرفراز حسین نے روزنامہ”پاکستان“ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا۔طاہر مسعود نے کہا رئیل اسٹیٹ سیکٹر سب سے زیادہ ریونیو دینے والا شعبہ ہے حکومت انڈے کھائے مرغی حلال نہ کرے۔میاں طلعت احمد نے کہا ہے ایف بی آر کی طرف سے 200سے700 فیصد اضافے کے اعلان سے ملک بھر میں کام ٹھپ ہو کر رہ گیا ہے۔حکومتی ریونیو میں بھی بڑی کمی ہو گئی ہے۔حکومت ہوش کے ناخن لے اور ظالمانہ فیصلہ واپس لے۔ڈاکٹر خالد چودھری نے کہا اب16جنوری تک ریٹس ملتوی کرنے کا فیصلہ مسترد کرتے ہیں اور احتجاج کا اعلان کرتے ہیں۔فاؤنڈر گروپ کے چیئرمین حاجی لطیف چودھری سرفراز حسین نے کہا آٹھ دن میں فیصلہ واپس نہ لیا گیا تو کاروبار بند کرنے سمیت ملک گیر احتجاجی مظاہروں کا فیصلہ کر سکتے ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -