جیالوں کے پرزور مطالبے پرآصف زرداری کی (ن)لیگی قیادت پرتنقید شروع 

   جیالوں کے پرزور مطالبے پرآصف زرداری کی (ن)لیگی قیادت پرتنقید شروع 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور(شہزاد ملک) پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے پیپلز پارٹی کے جیالوں کے پر زور مطالبے پر پیپلز پارٹی کی روائتی مخالف جماعت مسلم لیگ (ن) کی قیادت کو تنقید کا بھرپور نشانہ بنانے کا سلسلہ شروع کردیا ہے اور ان کی جانب سے مسلم لیگ کی قیادت پر تنقید کا یہ سلسلہ پیپلز پارٹی کی جانب سے آنے والے الیکشن کی سیاست کی ایک سیاسی حکمت عملی کا نتیجہ ہے پیپلز پارٹی کے جیالوں کی شروع دن سے ہی اپنی لیڈر شپ سے یہ ڈیمانڈ رہی ہے کہ مسلم لیگ کے ساتھ سیاسی دوستی کی پینگیں بڑھانے کی بجائے ان کے ساتھ ماضی کی سیاسی مخالفت والی جارحانہ سیاست کا سلسلہ ہی جاری رکھا جائے۔پیپلز پارٹی کے رہنماؤں کا اس حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا ہے کہ جیالے اگر کسی سیاسی جماعت کو اپنی مخالف اور مقابلے والی جماعت سمجھتے ہیں تو وہ مسلم لیگ ہی ہے جیالوں کا کہنا ہے کہ پیپلز پارٹی کو نوے کی دہائی میں مسلم لیگ کی جانب سے جس قسم کی جارحانہ سیاسی مخالفت کا سامنا رہا اور اس کے نتیجے میں جس قسم کے مقدمات اور جو بدترین صعوبتیں برداشت کرنا پڑیں وہ ان کو پی ٹی آئی کی حکومت میں بھی نہیں ملیں اس لیئے ضرورت اس امر کی ہے کہ پیپلز پارٹی مسلم لیگ کے ساتھ سیاسی فاصلوں کو بڑھائے رکھے اور جارحانہ سیاست کو اپنایا جائے تاکہ جیالوں کو اس بات کا علم ہو سکے کہ ان کی لیڈر شپ اب ایک مرتبہ پھر جارحانہ سیاست کرنے جارہی ہے۔
پی پی قیادت 

مزید :

صفحہ اول -