شہری کو ملازمت نہ دینے پر صوبائی سیکرٹری لائیو سٹاک ان پرسن عدالت طلب

شہری کو ملازمت نہ دینے پر صوبائی سیکرٹری لائیو سٹاک ان پرسن عدالت طلب

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
 ملتان (خصو صی  ر پو رٹر)لاہور ہائی کورٹ کے دو ججز پر مشتمل ڈویژن بینچ نے عدالت عالیہ کے احکامات کے باوجود شہری(بقیہ نمبر29صفحہ6پر)
 کو ملازمت نہ دینے کے خلاف درخواست پر صوبائی سیکرٹری لائیو سٹاک کو ان پرسن طلب کرتے ہوئے سماعت آج مقرر کی ہے۔ قبل ازیں عدالت عالیہ میں پٹیشنر شوکت حسین نے درخواست دائر کرتے ہوئے موقف اختیار کیا تھا کہ 26 اپریل 2017 کو محکمہ لائیوسٹاک نے صوبائی سطح پر ویٹرنری اسسٹنس اور آرٹیفیشل ٹیکنیشن گریڈ 9 کی 800 آسامیوں کا اعلان کیا اس کے لئے ڈپلومہ اور میٹرک کا سرٹیفکیٹ لازمی تھا مگر میرٹ پر آنے کے باوجود اسے نظر انداز کیا گیا کیوں کہ پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل نے بہاالدین زکریا یونیورسٹی کا جاری کردہ ڈپلومہ تصدیق کرنے سے انکار کر دیا تھا کیونکہ جامعہ زکریا میڈیکل کونسل سے منظور شدہ نہیں جس پر عدالت عالیہ نے 16 نومبر 2017 کو پیٹشنر کے موقف کو درست قرار دیتے ہوئے اسے ملازمت فراہم کرنے کی ہدایت کی تھی لیکن عمل درآمد نہیں ہو سکا جس پر دوبارہ درخواست دائر کرنا پڑی  جس پر عدالت نے درخواست گزار کو ذاتی طور پر سماعت کرنے کا حکم دیتے ہوئے درخواست نمٹا دی تھی لیکن اس پر بھی عملدرآمد نہیں کیا گیا۔
طلب