سینیٹ کی خالی نشست پر شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی الیکشن ٹریبونل میں چیلنج، کیا موقف اختیار کیا گیا ؟ جانئے

سینیٹ کی خالی نشست پر شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی الیکشن ٹریبونل میں چیلنج، ...
سینیٹ کی خالی نشست پر شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی الیکشن ٹریبونل میں چیلنج، کیا موقف اختیار کیا گیا ؟ جانئے

  

پشاور(ڈیلی پاکستان آن لائن ) خیبرپختونخوا سے سینیٹ کے خالی نشست پر انتخابات کے لیے مشیر خزانہ شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی الیکشن ٹربیونل میں چیلنج کردیے گئے ہیں۔

نجی ٹی وی جیونیوز کے مطابق کاغذات نامزدگی عوامی نیشنل پارٹی کے امیدوار امیر زادہ کی جانب سے چیلنج کیے گئے ہیں۔اے این پی کے امید وار امیر زادہ نے ریٹرننگ افسر کے فیصلے کو چیلنج کرتے ہوئے مؤقف اختیار کیا کہ شوکت ترین مردان کے رہائشی نہیں ہیں اور نہ ہی الیکٹورل رول میں رجسٹرڈ ہیں جب کہ کاغذات نامزدگی کے ساتھ جو الیکٹورل رول جمع ہے وہ بھی سرٹیفائیڈ نہیں ہے۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ شوکت ترین مردان کے ووٹر ہی نہیں تو کیسے اس حلقے سے سینیٹ کے سیٹ پر الیکشن لڑسکتے ہیں لہٰذا  شوکت ترین کے کاغذات نامزدگی منظور کرنے کے ریٹرننگ افسر کے فیصلے کو کالعدم قرار دیا جائے۔واضح رہے کہ پاکستان تحریک انصاف نے شوکت ترین کو سینیٹر بنانے کے لیے ایوب آفریدی سے استعفیٰ لیا۔

مزید :

قومی -