ریپ سے بدنام ہونے والی ٹیکسی سروس نے جنسی درندوں کا توڑ ڈھونڈ لیا

ریپ سے بدنام ہونے والی ٹیکسی سروس نے جنسی درندوں کا توڑ ڈھونڈ لیا
ریپ سے بدنام ہونے والی ٹیکسی سروس نے جنسی درندوں کا توڑ ڈھونڈ لیا

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) چند روز قبل ایک ٹیکسی ڈرائیور کی جانب سے دہلی میں ایک خاتون کا ریپ کئے جانے کے بعد امریکی ٹیکسی سروس ”اُبر“ کافی مشکلات کا شکار ہوگئی اور قریباً ایک ماہ تک اسے بھارت میں پابندی کا سامنا بھی کرنا پڑا۔ تاہم اب کمپنی نے ممکنہ طور پر ڈرائیوروں کے نامناسب رویے کا توڑ ڈھونڈ لیا ہے۔ ”اُبر“ کے مطابق وہ اپنی موبائل ایپ میں ہنگامی (Panic) بٹن متعارف کروارہی ہے اور کسی بھی قسم کی ہنگامی صورتحال میں صارف اسے دبا کر پولیس کو مطلع کرسکے گا۔ اس کے علاوہ ایک سیفٹی نیٹ فیچر بھی ڈالا جارہا ہے جس کے تحت ٹیکسی لینے والا صارف اپنے سفر کی تفصیلات اور اپنی لوکیشن 5 افراد سے شیئر کرسکے گا۔

مزید پڑھیں:وہ پر اسرار لڑکی جو جب چاہے اپنی روح کو جسم سےعلیحدہ کر سکتی ہے

یہ فیچر بھارت میں بدھ کے روز سے دستیاب ہوں گے۔ یاد رہے دوسری جانب کمپنی کے ڈرائیور کی درندگی کا نشانہ بننے والی نوجوان بھارتی خاتون نے ”اُبر“ کے خلاف مقدمہ بھی دائر کررکھا ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -