جنوری 52خطرناک ڈکیت گروہوں کے173 خطر ناک ملزموں کو گرفتار کر لیا گیا

جنوری 52خطرناک ڈکیت گروہوں کے173 خطر ناک ملزموں کو گرفتار کر لیا گیا

  

لاہور(کرائم سیل) ایس ایس پی انویسٹی گیشن رانا ایاز سلیم نے کہا ہے کہ ماہ جنوری کے دوران انویسٹی گیشن پولیس نے ڈکیتی کے دوران شہریوں کو مزاحمت پر قتل کرنے، ڈکیتی،ہاؤس رابری، قتل،شاہراؤں پر ناکے لگا کر وارداتیں کرنے ،نقب زنی اور کار و موٹر سائیکل چوری کی300سے زائد وارداتوں میں ملوث 52خطرناک ڈکیت گروہوں کے 173خطرناک ملزموں کو گرفتار کر کے ان سے ڈیڑھ کروڑ روپے سے زائد مالیت کا مال مسروقہ اور ناجائز اسلحہ برآمد کر لیا ہے۔ صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے ایس ایس پی نے بتایا کہ گرفتار ملزموں میں ہاشو، جگنو، شادا، شوکی اور شیرا ڈکیت گینگ سمیت مختلف گینگز کے 74ملزمان ڈکیتی، قتل سمیت مختلف سنگین مقدمات میں ریکارڈ یافتہ ہیں جو جیل سے باہر آ کر نئے گینگز بنا کر دوبارہ وارداتیں شروع کر دیتے ہیں۔ دوران تفتیش ان ڈکیت گروہوں کے ملزمان نے شاہدرہ، شفیق آباد، راوی روڈ، بھاٹی گیٹ، ٹبی سٹی، نولکھا، فیصل ٹاؤن، نصیر آباد، گلبرگ،غالب مارکیٹ، اچھرہ، ماڈل ٹاؤن،نشتر کالونی، ہیر، ڈیفنس اے،ڈیفنس بی، فیکٹری ایریا، جنوبی چھاؤنی، شمالی چھاؤنی ، باغبانپورہ، ہربنس پورہ، مناواں، قلعہ گجر سنگھ، لٹن روڈ، مزنگ، شالیمار،گجر پورہ، ہنجر وال، چوہنگ، ستو کتلہ، نواب ٹاؤن، مانگا منڈی، جوہر ٹاؤن، گلشن راوی، اقبال ٹاؤن، نوانکوٹ اور سمن آباد کی حدود میں ڈکیتی ،قتل، راہزنی اور ہاؤس رابری، نقب زنی، کار اور موٹر سائیکل چوری کی 300وارداتوں کا اعتراف کیا ہے جن میں سے ماہ جنوری کے دوران ہونیوالی 123وارداتیں بھی شامل ہیں جو ان ملزموں سے ٹریس ہوئی ہیں۔ پولیس نے ان ڈکیت گروہوں کے ملزمان کی نشاندہی پر ڈیڑھ کروڑ روپے سے زائد مالیت کے مسروقہ طلائی زیورات، موبائل فونز، لیپ ٹاپس، نقدی،4 درجن سے زائد موٹر سائیکلیں اور کاریں، دیگر قیمتی اشیاء اورناجائز جدید آٹو میٹک آتشیں اسلحہ برآمد کر لیا ہے۔ یہ امر قابل ذکر ہے کہ ہاشو اور شیرا ڈکیت گینگ کے ملزموں نے ستمبر2014میں شیخوپورہ اور فیصل آباد میں دوران واردات مزاحمت پر چار شہریوں کو فائرنگ کر کے قتل بھی کر دیا تھا۔جن مقدمات میں مذکورہ گینگ کے ملزمان اشتہاری بھی ہیں۔ایس ایس پی انویسٹی گیشن نے مزید کہا کہ عوام کے جان و مال کا تحفظ پولیس کی اولین ذمہ داری ہے جس کے لیے پولیس فورس کو اپنے فرائض خلوص نیت اور عبادت سمجھ کر ادا کرنے چاہیے ۔ اُنہوں نے کہا کہ مذکورہ ڈکیت گروہوں کی گرفتاری سے لاہور کے کرائم گراف میں یقیناکمی دیکھنے کو ملے گی۔رانا ایاز سلیم نے کہا کہ سنگین وارداتوں میں ملوث اشتہاری ملزمان کی گرفتاری کے علاوہ خاص طور پر ڈکیتی، راہزنی، ہاؤس رابری اوردہشت گردی کے مقدمات میں ملوث ملزمان کی گرفتاری کے لیے ڈویژن کی سطح پر سپیشل پولیس سکواڈ تشکیل دیئے گئے ہیں جو ان ملزموں کی گرفتاری کے لیے سر گرم عمل ہیں اور شہر کے جرائم پر اثر انداز ہونیوالے یہ اشتہاری اور مفرور انشااللہ بہت جلد قانونی کی گرفت میں ہونگے۔

مزید :

علاقائی -