گیس اور بجلی چوری کی سزا 5 سے بڑھا کر 10 سال ،جرمانہ50 لاکھ روپے کرنے پر غور

گیس اور بجلی چوری کی سزا 5 سے بڑھا کر 10 سال ،جرمانہ50 لاکھ روپے کرنے پر غور

  

لاہور(زاہد علی خان) حکومت گیس اور بجلی چوری کی سزائیں اور جرمانے بڑھانے پر غور کر رہی ہے، ذرائع کے مطابق حکومت کو ایک سمری بھجوائی گئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ گیس اور بجلی چوری کی سزا پانچ سال سے دس سال جبکہ جرمانہ پچاس لاکھ کر دیا جائے کیونکہ جرمانہ اور چوری کی سزا ناکافی ہے اور بڑے بڑے چور ان سزاؤں کو خاطر میں نہیں لاتے اور بعض سرکاری افسران بھی ان کے ساتھ ملے ہوئے ہیں جس کی وجہ سے اس قسم کی وارداتیں کم کی بجائے زیادہ ہو رہی ہیں۔ مزید بتایا گیا ہے کہ ایف آئی اے اور دوسرے متعلقہ اداروں کی مدد سے سمری بھجوائی گئی ہے اس میں سفارش کی گئی ہے کہ بجلی اور گیس چوری کی روک تھام کے لئے ضروری ہے کہ سزائیں اور جرمانہ بڑھا دیا جائے اور ایسے سرکاری افسران اور اہلکاروں کے خلاف بھی کارروائی کریں جن کی پشت پناہی سے ایسی وارداتیں ہو رہی ہیں، ان افسران کے خلاف بھی مقدمات درج کئے جائیں کیونکہ یہ سرکاری افسران بھی برابر کے چوری ہیں، سمری میں مزید یہ بھی کہا گیا ہے کہ چھاپوں کے دوران جو آلات قبضے میں لئے جائیں انہیں ضبط کر کے فیکٹری کو سر بمہر کر دیا جائے۔ گیس اور بجلی چوری

مزید :

صفحہ آخر -