دنیا کا امن مسئلہ کشمیر اور فلسطین کے حل سے مشروط ہے ، افتخار حسین

دنیا کا امن مسئلہ کشمیر اور فلسطین کے حل سے مشروط ہے ، افتخار حسین

  

 لاہور (پ ر) ہیومن رائٹس ویلفےئر فورم کے صدر افتخار حسین نے کشمیریوں پر بھارتی اور فلسطینیوں پر اسرائیلی مظالم کو انسانی حقوق کے علم بردار ممالک اور تنظیموں کے منہ پر طمانچہ قرار دیتے ہو ئے کہا ہے کہ دنیا کا امن مسئلہ کشمیر اور فلسطین کے حل سے مشروط ہے جب تک عادلانہ نظام رائج نہیں ہوگا دنیا کو پرامن بنانے کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہو سکتا ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز مقامی ہوٹل میں منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہو ئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ دنیا کی بڑی طاقتیں امریکا، برطانیہ اور عالمی برادری کے نمائندہ ادارے اقوام متحدہ کو لاکھوں کشمیریوں کی قربانیوں کے تناظر میں کشمیر کا مسئلہ ریفرنڈم یا آزادا نہ حق رائے دہی کے ذریعے حل کروا دینا چاہیے ، اگر سکاٹ لینڈ، مشرقی تیمور اور سوڈان میں ریفرنڈم کروا کے وہاں کے عوام کی رائے کے ذریعے انکے مستقبل کا فیصلہ ہو سکتا ہے تو کشمیریوں سے انکا بنیادی حق سلب کرکے انہیں شدید مظالم اور سخت اذیتوں سے کیوں دوچار کیا جارہا ہے؟۔ انہوں نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر پر اپنا قبضہ برقرار رکھ کر جہاں کشمیریوں کو اپنا غلام بنا کر رکھنا چاہتا ہے وہیں اسکا سب سے بڑا مقصد یہ ہے کہ وہ پاکستان میں کشمیر سے آنے والے دریاوں کا پانی اپنے قابو میں رکھ کر کبھی شدید سیلابوں اور کبھی سخت قحط سالی سے دوچار کردے ان دریاوں پر بند باندھ کر بھارت عملی طور ایساکربھی رہاہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -