آئیے مسکرائیں

آئیے مسکرائیں

ڈاکٹر (نوکر سے): "دیکھو دروازے پر کون آیا ہے۔"

نوکر: "کوئی مریض ہوگا!"

ڈاکٹر: "جاؤ معلوم کرو مریض نیا ہے یا پرانا۔"

نوکر: "نیا ہی ہوگا۔ آپ کے پاس آکر پرانا تو مشکل ہی سے بچتا ہے۔"

***

ایک کوچوان (دوسرے کوچوان سے): "تمہارا گھوڑا سوکھی گھاس بڑے شوق سے کھا رہا ہے۔ جب کہ میرا گھوڑا تو صرف ہری گھاس کھاتا ہے۔

دوسرا کوچوان (بڑے فخر سے): "میں نے گھوڑے کی آنکھوں پر ہرے شیشوں کا چشمہ لگایا ہوا ہے۔"

***

جیل کا داروغہ (قیدی سے): "معاف کرنا، میں نے تمہیں چار دن زیادہ قید میں رکھا۔"

قیدی: " کوئی بات نہیں۔ آئندہ آؤں تو چار دن پہلے رہا کردینا۔"

***

اباپ بیٹے سے :

اگر اس بار تم فیل ہوے تو مجھے اپنا باپ مت کہنا۔

اگلے دن باپ :

کیا بنا رزلٹ کا ؟

بیٹا : بس "بشیر صاحب" کچھ مت پوچھیں۔۔۔

***

"ہم نے نیا گھر لیا ہے بہت بڑا ہے۔" ایک ننھی بچی نے اپنی سہیلی کو بتایا۔ "وہ اتنا بڑا ہے کہ ہم سب کے لیے الگ الگ کمرہ ہے۔" پھر تاسف سے کہنے لگی "لیکن امی کے لیے کوئی کمرہ نہیں بچا، انہیں اب بھی ابو کے کمرے میں سونا پڑتا ہے۔"

***

ایک لڑکا (اپنے دوست سے): "یونیورسٹی میں میرا رزلٹ چیک کر کے بتانا۔ میرے ساتھ ابّو ہوں گے۔ اگر میں ایک پیپر میں فیل ہوں تو کہنا کہ مسلمان کی طرف سے سلام۔ اگر دو میں فیل ہوں تو کہنا کہ مسلمانوں کی طرف سے سلام۔"

دوست رزلٹ دیکھ کر آیا اور بولا: "پوری امتِ مسلمہ کی طرف سے سلام۔"

***

ایک آدمی نجومی کے پاس گیا اور بولا، "میری ہتھیلی میں کھجلی ہورہی ہے۔"

نجومی بولا، "تم کو جلد ہی دولت ملنے والی ہے۔"

آدمی بولا، "میرے پاؤں میں بھی کھجلی ہورہی ہے۔"

نجومی بولا، "تم سفر بھی کرو گے۔"

آدمی بولا، "میرے سر میں بھی کھجلی ہورہی ہے۔"

نجومی جھلا کر بولا، "چلو بھاگو یہاں سے، تمہیں تو خارش کی بیماری معلوم ہوتی ہے۔"

***

ایک دوست (دوسرے سے): یار! جب سے تمہارے گھر آیا ہوں یہ مکھیاں پیچھا ہی نہیں چھوڑتیں۔

دوسرا دوست: مکھیاں گندی چیزوں کو دیکھ کر ہی منڈلاتی ہیں۔

***

ایک دوست (دوسرے سے): جب سورج کی پہلی کرن مجھ پر پڑتی ہے میں اٹھ جاتا ہوں۔

دوسرا دوست: لیکن تمہاری امی کہتی ہیں کہ تم پورا دن سوتے رہتے ہو۔

پہلا دوست: ہاں دراصل میرے کمرے کی کھڑکی مغرب میں ہے۔

***

اایک دوست (دوسرے سے): وہ کون سی چیز ہے جس کے چار پاؤں ہوتے ہیں مگر وہ چل نہیں سکتی؟۔

دوسرا دوست: ایسی کوئی چیز نہیں ہے۔

پہلا دوست: میز۔

***

ایک دوست (دوسرے سے): میں نے نیا فلیٹ خرید لیا ہے اور کمرے کو بہترین طریقے سے سجایا ہے۔

دوسرا دوست: کیسے سجایا ہے؟

پہلا دوست: بالکل آفس کے انداز میں، تاکہ مجھے خوب گہری نیند آئے۔

***

ایک لڑکا (اپنے دوست سے): "یونیورسٹی میں میرا رزلٹ چیک کر کے بتانا۔ میرے ساتھ ابّو ہوں گے۔ اگر میں ایک پیپر میں فیل ہوں تو کہنا کہ مسلمان کی طرف سے سلام۔ اگر دو میں فیل ہوں تو کہنا کہ مسلمانوں کی طرف سے سلام۔"

دوست رزلٹ دیکھ کر آیا اور بولا: "پوری امتِ مسلمہ کی طرف سے سلام۔"

***

ماں نے رونے ?? وجہ پوچھی تو اس نے بتا?ا ?ہ استاد نے مارا ہے

ماں:

ب?ٹاتم نے پھر ?وء? غلط محاورہ بولا ہوگا

لڑ?ا::cry:

استاد بہت ڈانٹ رہے تھے۔ م?ں نے ?ہا"جو گرجتے ہ?ں وہ برستے نہ?ں"

ایک آدمی نجومی کے پاس گیا اور بولا، "میری ہتھیلی میں کھجلی ہورہی ہے۔"

نجومی بولا، "تم کو جلد ہی دولت ملنے والی ہے۔"

آدمی بولا، "میرے پاؤں میں بھی کھجلی ہورہی ہے۔"

نجومی بولا، "تم سفر بھی کرو گے۔"

آدمی بولا، "میرے سر میں بھی کھجلی ہورہی ہے۔"

نجومی جھلا کر بولا، "چلو بھاگو یہاں سے، تمہیں تو خارش کی بیماری معلوم ہوتی ہے۔"

***

عورت (لڑکے سے): تمہارا اسکول کہاں ہے؟

لڑکا: میرے گھر کے سامنے۔

عورت: تو تمہارا گھر کہاں ہیں؟

لڑکا: اسکول کے سامنے۔

عورت: اچھا دونوں کہاں ہیں؟

لڑکا: ایک دوسرے کے سامنے۔

***

ایک دوست (دوسرے سے): یار! جب سے تمہارے گھر آیا ہوں یہ مکھیاں پیچھا ہی نہیں چھوڑتیں۔

دوسرا دوست: کھیاں گندی چیزوں کو دیکھ کر ہی منڈلاتی ہیں۔

***

ایک دوست (دوسرے سے): جب سورج کی پہلی کرن مجھ پر پڑتی ہے میں اٹھ جاتا ہوں۔

دوسرا دوست: لیکن تمہاری امی کہتی ہیں کہ تم پورا دن سوتے رہتے ہو۔

پہلا دوست: ہاں دراصل میرے کمرے کی کھڑکی مغرب میں ہے۔

***

اطلاعی بیل بجنے پر بیوی نے دروازہ کھولا تو دروازے پر شوہر کو کھڑاپایا۔

بیوی نے مسکرا کر کہا، "آپ کے چہرے سے تھکن ظاہر ہورہی ہے۔ لگتا ہے آج آپ نے آفس میں بہت کام کیا ہے۔"

شوہر نے کہا، "ہاں بات تو یہی ہے۔"

بیوی نے کہا، "پھر تو زبردست کھانا ہونا چاہیے۔ بیف برگر، بروسٹ، فرائیڈ فش، آئس کریم اور آخر میں کولڈ ڈرنک۔"

شوہر نے کہا، "نہیں، کھانا ہم آج گھر میں ہی کھائیں گے۔"

***

ایک دوست (دوسرے سے): وہ کون سی چیز ہے جس کے چار پاؤں ہوتے ہیں مگر وہ چل نہیں سکتی؟۔

دوسرا دوست: ایسی کوئی چیز نہیں ہے۔

پہلا دوست: میز۔

***

ایک دوست (دوسرے سے): میں نے نیا فلیٹ خرید لیا ہے اور کمرے کو بہترین طریقے سے سجایا ہے۔

دوسرا دوست: کیسے سجایا ہے؟

پہلا دوست: بالکل آفس کے انداز میں، تاکہ مجھے خوب گہری نیند آئے۔

***

مزید : ایڈیشن 2