نواز شریف کے لیے ایک اور مشکل،نیب نے ایل این جی کیس میں ملزم نامزد کر دیا

نواز شریف کے لیے ایک اور مشکل،نیب نے ایل این جی کیس میں ملزم نامزد کر دیا
نواز شریف کے لیے ایک اور مشکل،نیب نے ایل این جی کیس میں ملزم نامزد کر دیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان مسلم لیگ ن کے قائد اور العزیزیہ ریفرنس میں کوٹ لکھپت جیل میں قید کاٹنے والے سابق وزیر اعظم نواز شریف کے لئے ایک نئی مشکل کھڑی ہو گئی ،قومی احتساب بیورو نے ایل این جی کیس میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے بعد نواز شریف کو بھی  ملزم نامزد  کر دیا ، ملزمان پر اختیارات کے ناجائز استعمال اور کرپشن سے قومی خزانے کو 220 ارب کا نقصان پہنچانے کا الزام ہے۔

نجی ٹی وی نے دستاویزات کے حوالے سے بتایا کہ ایل این جی ٹرمینل کا مبینہ طور پر غیر قانونی ٹھیکہ دینے پر انکوائری میں نواز شریف کو باقاعدہ ملزم نامزد کر دیا گیا ہے،شاہد خاقان عباسی کو بھیجے گئے نوٹس میں نواز شریف کو ملزم لکھا گیا ہے۔ ٹھیکے میں بطور وزیر اعظم ان کے کردار کا تعین کیا جا رہا ہے، قواعد کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ایل این جی کا ٹھیکہ دینے سے قومی خزانے کو 220 ارب روپے کا نقصان ہوا۔ ایل این جی کیس میں وزارت پیٹرولیم، سوئی سدرن گیس کمپنی سمیت دیگر افسران کے خلاف بھی اختیارات کے ناجائز استعمال اور کرپشن سے قومی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان پہنچانے کے الزام میں تحقیقات کی جا رہی ہیں۔واضح رہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف نے طبی بنیادوں پر اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست ضمانت دائر کی ہوئی ہے جس کی سماعت رواں ماہ  12 فروری منگل کے روز ہو گی ۔

مزید : علاقائی /پنجاب /راولپنڈی /قومی