ورچوئل یونیورسٹی اور فن لینڈ کجانی یونیورسٹی کے درمیان معاہدہ

ورچوئل یونیورسٹی اور فن لینڈ کجانی یونیورسٹی کے درمیان معاہدہ

  



اسلام آباد (پ ر)وزارت آئی ٹی و ٹیلی کام کی ہدایت پہ ورچوئل یونیورسٹی آف پاکستان اور فن لینڈ کجانی یونیورسٹی کے درمیان معاہدہ نجی ہوٹل میں ہونے والی تقریب میں سابق وزیر آئی ٹی و ٹیلی کام ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی اور وفاقی وزیر پلاننگ اسد عمر نے خصوصی شرکت کی۔تقریب میں سیکرٹری آئی ٹی و ٹیلی کام شعیب احمد صدیقی بھی شریک ہوئے۔ ریکڑ ورچوئل یونیورسٹی نعیم طارق اور فن لینڈ کجانی یونیورسٹی کے صدر مارٹین سیرن نے معاہدے پہ دستخط کیئے۔ وفاقی وزیر پلاننگ اسد عمر نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ورچوئل یونیورسٹی کی اس تقریب میں شامل ہونا میرے لیئے اعزاز کی بات ہے۔یہ پاکستان کی واحد یونیورسٹی ہے جس کے نہ صرف پاکستان کے ہر شہر میں بلکہ دنیا کے بیشتر مملاک میں بھی طلبا زیرتعلیم ہیں۔یہ معاہدہ فن لینڈ اور پاکستان کے تعلیمی شعبہ کو قریب لانے میں مدد دے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ خالد مقبول صدیقی صاحب نے ورچوئل یونیورسٹی کو لے کے بہت کام کیا۔ ریکٹر ورچوئل یونیورسٹی نعیم طارق نے کہا کہ حکومت پاکستان کی بے حد توجہ سے پاکستان میں تعلیم کا میعار بہت بہتر سطح پہ چلا گیا ہے۔اس معاہدے سے ورچوئل یونیورسٹی کے نہ صرف موجودہ 75000 طلبا و طالبات مستفید ہوں گے بلکہ جو طلبا اپنی ڈگری مکمل کر چکے وہ بھی مستفید ہو سکیں گے۔

مزید : کامرس