شاہ محمود قریشی سے شہزادہ فیصل کا رابطہ، سعودی عرب، پاکستان کا مقبوضہ کشمیر سمیت علاقائی امور پر مشاورت جاری رکھنے پر اتفاق

شاہ محمود قریشی سے شہزادہ فیصل کا رابطہ، سعودی عرب، پاکستان کا مقبوضہ کشمیر ...

  



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک،نیوزایجنسیاں) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ ریاستی جبر سے کشمیریوں کی آواز کو دبایا نہیں جا سکتا،پاکستان ہر سطح اور ہر فورم پرکشمیریوں کی آواز بلند کرتا رہے گا،کشمیریوں کو حق خود ارادیت ملنے تک پاکستان ہر محاذ پر کشمیریوں کی اخلاقی، سفارتی اور سیاسی حمایت جاری رکھے گا۔ہفتہ کو وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی سے آل پارٹیز حریت کانفرنس کے رہنماؤں نے ملاقات کی جس میں سید عبداللہ گیلانی، سید فیض احمد نقشبندی اور حریت لیڈر یسین ملک کے نمائندے رفیق ڈار سمیت آل پارٹیز حریت کانفرنس کے اہم قائدین شامل تھے۔ وزیر خارجہ نے حریت قائدین کو وزیر اعظم آزاد جموں کشمیر راجہ فاروق حیدر اور آزاد کشمیر کے دیگر پارلیمانی رہنماؤں سے ہونیوالی حالیہ ملاقات اور اس ملاقات میں کشمیر کی صورتحال پر کی جانے والی تفصیلی مشاورت سے آگاہ کیا۔حریت کانفرنس کے وفد نے بھارت سرکار کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں کئے گئے جابرانہ و یکطرفہ اقدامات، غیر انسانی لاک ڈاؤن، مواصلاتی بندش، بھارتی قابض افواج کے ظلم و ستم اور بنیادی انسانی حقوق کی پامالیوں کو عالمی سطح پر اجاگر کرنے کے لئے حکومت پاکستان اور بالخصوص وزیر اعظم عمران خان اور وزیر خارجہ کی ذاتی کاوشوں کو سراہا۔ وزیر خارجہ نے کہاکہ ریاستی جبر سے کشمیریوں کی آواز کو دبایا نہیں جا سکتا، ہندوتوا کی سوچ پر عمل پیرا، مودی سرکار کا اصل چہرہ پوری دنیا کے سامنے بے نقاب ہو چکا ہے۔مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہاکہ پاکستان ہر سطح اور ہر فورم پرکشمیریوں کی آواز بلند کرتا رہے گا۔دوسری طرف شاہ محمود کی زیرصدارت وزارت خارجہ میں آزاد کشمیر کے پارلیمانی رہنماؤں کا اہم اجلاس ہوا۔اجلاس میں مقبوضہ جموں و کشمیر میں گذشتہ چھ ماہ سے جاری مسلسل کرفیو اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کو بین الاقوامی سطح پر اجاگر کرنے کیلئے آئندہ کی حکمت عملی پر تفصیلی مشاورت کی گئی،وزیرخارجہ نے کہاکہ مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے ایجنڈے پر موجود ہے لیکن ہمارا سیکورٹی کونسل سے دوبارہ رجوع کرنے کا مقصد اس مسئلے کو از سر نو بین الاقوامی سطح پر اجاگر کرنا اور اپنے موقف کی تجدید کرنا تھا،پاکستان، اپنے مظلوم کشمیری بھائیوں کے جائز حق،حق خودارادیت کے حصول کی جدوجہد میں ان کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی معاونت جاری رکھے گا۔انہوں نے کہاکہ ہیومن رائٹس کونسل کے جنیوا میں ہونیوالے اجلاس میں بھی ہم نے مقبوضہ جموں و کشمیر کے مسئلے کو موثر انداز میں اٹھایا،امریکی کانگریس اور یورپی پارلیمنٹ میں بھی مسئلہ کشمیر پر سیر حاصل بحث ہو چکی ہے،ہم نے وزیراعظم کی ہدایت پر وزارت خارجہ میں کشمیر سیل قائم کیا جو موثر انداز میں مسئلہ کشمیر کو بین الاقوامی سطح پر اجاگر کرنے کیلئے اپنا کردار ادا کر رہا ہے۔علاوہ ازیں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان نے ٹیلیفونک رابطہ کیا،دونوں وزرائے خارجہ کے مابین، مسئلہ کشمیر کو او آئی سی سمیت مختلف پلیٹ فارمز پر اجاگر کرنے کیلئے مشترکہ کاوشیں بروئے کار لانے کے حوالے سے تبادلہ خیال ہوا اور مقبوضہ جموں و کشمیر سمیت اہم علاقائی امور پر دو طرفہ مشاورت جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔دونوں وزرائے خارجہ نے پاکستان اور سعودی عرب کے مابین دو طرفہ کثیر الجہتی تعلقات کی اہمیت کو پیش نظر رکھتے ہوئے انہیں مزید مستحکم کرنے کی ضرورت پر زور دیا،وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے او آئی سی رابطہ گروپ کے اہم رکن ہونے کی حیثیت سے، مسئلہ کشمیر پر پاکستانی موقف کی غیر متزلزل اور بھرپور حمایت پر سعودی ہم منصب کا شکریہ ادا کیا،دونوں وزرائے خارجہ کے مابین، مسئلہ کشمیر کو او آئی سی سمیت مختلف پلیٹ فارمز پر اجاگر کرنے کیلئے، مشترکہ کاوشیں بروئے کار لانے کے حوالے سے بھی تبادلہ خیال ہوا،دونوں وزرائے خارجہنے مقبوضہ جموں و کشمیر سمیت اہم علاقائی امور پر دو طرفہ مشاورت جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔

شاہ محمود قریشیس

مزید : صفحہ اول