حکومت کاملکی سطح پر تیارہونے والے سافٹ ویئرز کو فروغ دینے کا فیصلہ

    حکومت کاملکی سطح پر تیارہونے والے سافٹ ویئرز کو فروغ دینے کا فیصلہ

  



کراچی(این این آئی)وزیر اعظم کی نیشنل ٹاسک فورس برائے سائنس اور ٹیکنالوجی کے سربراہ پروفیسر ڈاکٹر عطاالرحمن نے کہا کہ حکومت پاکستان مصنوعی ذہانت،بِگ ڈیٹا،سائبرسیکیورٹی اور اس سے منسلک دیگر ٹیکنالوجیزپر پچاس بلین خرچ کرے گا۔حکومتی دفاتر میں ملکی سطح پر تیارہونے والے سافٹ ویئرز کے استعمال کو فروغ دیا جائے گاتاکہ ملک میں آئی ٹی کی صنعت کو مستحکم کرنے میں مددمل سکے۔ جامعہ کراچی کے شعبہ کمپیوٹرسائنس کے زیر اہتمام ”انفارمیشن سائنس اینڈ کمیونیکشن ٹیکنالوجی“ کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر عطاالرحمن کا کہنا تھا کہ صدر پاکستان اور وزیر اعظم اس شعبہ میں خصوصی دلچسپی لے رہے ہیں۔حکومتی سطح پر یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ مصنوعی ذہانت کے مراکز کو ملک کے کونے کونے میں پھیلایاجائے۔بین الاقوامی رپورٹس کے مطابق اس دہائی کی ایجادات سے 100 کھرب ڈالرز حاصل ہونگے۔ ان تمام میں مصنوعی ذہانت،کلاؤڈ کمپیوٹنگ،ایڈوانسٹڈمیٹریلز،انڈسٹریل بائیوٹیکنالوجی،انٹرنیٹ آف تھینگز،انرجی اسٹوریج سسٹم اور دیگر شامل ہیں۔پاکستانی جامعات اور سافٹ ویئر ہاوسزاور انڈسٹریز کو چاہیئے کہ وہ مارکیٹ کی ضروریات کو مد نظر رکھتے ہوئے کام کریں تاکہ ملک کو زیادہ سے زیادہ بزنس حاصل ہو اور وہ اپنے ذرائع مبادلہ میں خاطر خواہ اضافہ کرسکیں۔

سافٹ ویئرزکا فروغ

مزید : صفحہ اول