مہنگائی کنٹرول سے باہر، حکومتی ناکامی پرسرکاری ادارے بھی چیخ اٹھے

  مہنگائی کنٹرول سے باہر، حکومتی ناکامی پرسرکاری ادارے بھی چیخ اٹھے

  



کراچی (این این آئی)ملک بھر میں ایک ہفتے کے دوران چینی سمیت 16 اشیا کی قیمتوں میں خوفناک اضافہ ہوا ہے۔پاکستان شماریات بیورو کے مطابق فروری کے پہلے ہفتے میں ہی مہنگائی کی شرح میں 0.21فیصد اوپر چلی گئی۔ کوکنگ آئل، گھی، پیاز اور گڑ کی قیمتوں میں بھاری اضافہ جبکہ دال مونگ اور دال مسور کی قیمتوں میں معمولی اضافہ ہوا۔ لہسن کی قیمت 70 روپے اضافے کیساتھ 375 روپے فی کلو ریکارڈ کی گئی جبکہ چینی دو روپے اضافے کے ساتھ 81 روپے فی کلو میں فروخت ہو رہی ہے۔گزشتہ ہفتے ٹماٹر سمیت آٹھ اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں کمی ریکارڈ کی گئی،اسکے علاوہ انڈے، آلو، ایل پی جی، آٹا، چکن، دال چنا اور دال ماش بھی سستی ہوئیں جبکہ دودھ سمیت ستائیس اشیا کی قیمتوں میں استحکام دیکھا گیا۔دوسری جانب حکومت نے جنوری میں غذائی اشیا آٹا چینی اور گھی کی قیمتوں میں اضافہ کے باعث مہنگائی میں ریکارڈ اضافہ پر کنٹرول کیلئے سفارشات کیلئے ماہرین پر مشتمل کمیٹی قائم کرنے کا فیصلہ کیا ہے، جو پندرہ دنوں میں ملک میں غذائی اشیا کی طلب و رسد کو بہتر بنانے کیلئے اپنی سفارشات مرتب کرے گی۔

مہنگائی

مزید : صفحہ اول