کشمیر تنازع کروڑوں لوگوں کی بنیادی حقوق، حق خود ارادیت کامسئلہ ہے: خالد مجید

        کشمیر تنازع کروڑوں لوگوں کی بنیادی حقوق، حق خود ارادیت کامسئلہ ہے: ...

  



جدہ (محمد اکرم اسد) کشمیر کا مسئلہ کوئی زمینی تنازع نہیں یہ کشمیر کے لوگوں کے بنیادی حقوق اور ان کے حق خودارادیت کا مسئلہ ہے. اس کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق جلد از جلد ہونا چاہیے۔ بھارتی ظلم کیخلاف پاکستان اور آزادکشمیر کا بچہ بچہ مظلوم کشمیری قوم کیساتھ کھڑا ہے. ان خیالات کا اظہار جموں کشمیر کمیونٹی کی طرف سے منعقد کی گئی یوم یکجہتی کشمیر کے حوالے سے پروقار تقریب سے مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کیا. تقریب کی صدارت چیئرمین جے کے سی او سردار اشفاق نے کی مہمانان خصوصی او آئی سی میں پاکستان کے مستقل مندوب سفیر رضوان سعید شیخ اور قونصل جنرل خالد مجید تھے۔ مہمان خصوصی خالد مجید نے اپنے خطاب میں کہا کہ کشمیر کا مسئلہ کوئی زمینی تنازعہ نہیں یہ کشمیری قوم کے بنیادی حقوق کا مسئلہ ہے یہ ان کی مسلمہ حق خوداردیت کے حصول کی جدوجہد ہے جس کا اقوام عالم نے ان سے وعدہ کیا ہے ہندوستان اس کو ایک علاقائی اور زمینی تنازعہ بنانے کے کوشش کررہا ہے جو حقائق کے منافی ہے۔ او آئی سی میں پاکستان کے مستقل مندوب رضوان سعید شیخ نے کہا کہ کشمیر اور پاکستان کا بندھن ایک لازوال اور فطری ہے۔ کشمیر زمینی، مذہبی، معاشرتی، ثقافتی، معاشی۔ اعتبار سے پاکستان کا فطری حصہ ہے جس کو کبھی بھی نہیں بدلا جا سکتا، کشمیر کے مسئلے کا حل کسی عسکری کاروائی میں نہیں ہوسکتا۔چیئرمین جموں کشمیر کمیونٹی اوورسیز نے اپنے خطاب میں حکومت پاکستان، افواج پاکستان، پاکستان کے اداروں اور خاص طور پر پاکستان کی عوام کا شکریہ ادا کیا کہ انھوں نے ہر وقت اپنے کشمیری بھائیوں کا ساتھ دیا۔ انہوں نے ایک قرار داد بھی پیش کی جس میں مقبوضہ کشمیر کے لوگوں کیساتھ یکجہتی، ہندوستانی ظلم وستم کو روکنے، کشمیری شناخت کے قوانین کی بحالی، کشمیری قیادت کی آزادی اور کشمیریوں کو استصواب رائے کے حق دینے کا مطالبہ کیا گیا جس کی سب حاضرین نے ہاتھ بلند کر کے تائید کی یہ قرار داد اس کے بعد سردار اشفاق، سردار عبداللطیف عباسی اور سردار وقاص نے رضوان سعید شیخ کو پیش کی جو اسے جموں کشمیر کمیونٹی اوورسیز کی طرف سے او آئی سی میں پیش کریں گے۔ دیگر مقررین جنہوں نے خطاب کیا ان میں کشمیر کمیٹی جدہ کے چئیرمین مسعود پوری، چوہدری خورشید متیال، معروف حسین، راجہ شمروز، خالد گجر، سردار مہتاب سرور، کامران بیگ شامل تھے۔

خالد مجید

مزید : صفحہ آخر