جنر ل ڈیوٹی پرپابندی نظرانداز، ڈاکٹرز کی من مانیاں،حکام خاموش

  جنر ل ڈیوٹی پرپابندی نظرانداز، ڈاکٹرز کی من مانیاں،حکام خاموش

  



ملتان (وقائع نگار)محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر پنجاب کے ڈاکٹروں نے جنرل ڈیوٹی پابندی کے احکامات(بقیہ نمبر21صفحہ12پر)

کو نظر انداز کرتے ہوئے اپنی من مانیا شروع کردیں۔ محکمہ صحت ملتان کے زیر اہتمام چلنے والے ہسپتالوں کے ڈاکٹروں نے اپنی اصل جائے تعیناتی چھوڑ پر جنرل ڈیوٹی سرانجام دے رہے ہیں۔جوکہ محکمہ صحت قانون کے برعکس ہے۔ذرائع کے مطابق محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر پنجاب نے کچھ عرصہ قبل ملتان سمیت صوبہ بھر کے چیف ایگزیکٹو آفسیرز ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی کو ہدایت کی تھی کہ وہ ڈاکٹروں و ملازمین کی جنرل ڈیوٹی کو فوری طور پر ختم کر دیں۔اور وہ سب اپنی اصل جائے تعیناتی پر حاضری کریں۔مگر ذرائع کے مطابق تحصیل و ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتالوں۔ دیہی و بنیادی مراکز صحت بیشتر ڈاکٹرز و عملہ تاحال جنرل ڈیوٹی سرانجام دے رہے ہیں۔جن سفارشوں کی وجہ سے اپنی اصل جائے تعیناتی پر حاضری نہیں کرتے۔جبکہ محکمہ صحت حکام کے مطابق جنرل پر پابندی ابھی برقرار ہے کوئی بھی ڈاکٹر و عملہ جنرل ڈیوٹی نہیں دے رہا ہے۔شکایت آنے پر فوری کاروائی کی جائے گی۔

پابندی

مزید : ملتان صفحہ آخر