فیصل آباد ایکسپریس بغیر اے سی اٹینڈنٹ روانہ، ہوا بند، مسافروں کابُرا حال

  فیصل آباد ایکسپریس بغیر اے سی اٹینڈنٹ روانہ، ہوا بند، مسافروں کابُرا حال

  



ملتان(نمائندہ خصوصی)تیزگام میں شارٹ سرکٹ کے ذریعے آگ لگنے سے90سے زائد مسافروں کے جاں بحق ہونے کے واقعہ کے باوجود شعبہ ریلوے ٹرین لائیٹنگ ملتان ڈویژن نے فیصل آبادایکسپریس کوبغیراے سی اٹینڈنٹ کے چلادیا۔مسافروں کااے سی بوگیوں میں تازہ ہواکاانتظام نہ ہونے سے براحال ہوگیا۔فیصل آبادسے ٹرین میں تازہ (بقیہ نمبر7صفحہ12پر)

ہواکے لئے اے سی بلورتوچلادیاگیاتاہم اے سی اٹننڈنٹ یہاں سے بھی نہیں دیاگیاٹرین خداکے آسرے پرملتان سے فیصل آباداورفیصل آبادسے ملتان پہنچ گئی۔بتایاجاتاہے کہ ملتان سے فیصل آبادکے لئے جانے والی فیصل آبادایکسپریس کی اے سی کلاس بوگیوں میں اے سی سسٹم سے تازہ ہواکی فراہمی کے لئے ڈیوٹی اے سی اٹنڈنٹ ٹرین پرآیاہی نہیں ٹرین لائیٹنگ فورمین نے بغیراے سی اٹینڈنٹ کے ہی روانہ کردیامسافروں نے فیصل آبادپہنچنے تک نہ صرف ریلوے انتظامیہ کے خلاف احتجاج کیابلکہ اپنے طورپراے سی کے بلورچلانے کی کوشش بھی کرتے رہے تاکہ تازہ ہواحاصل کرسکے۔ریلوے ذرائع کے مطابق ڈیوٹی روسٹرکے مطابق نہ آنے والے اے سی اٹینڈنٹ کی جگہ ملتان میں ہی ٹرین کی روانگی سے قبل متبادل اے سی اٹینڈنٹ کاانتظام کرناڈیوٹی فورمین کی ذمہ داری تھی تاہم نہ توملتان اورنہ ہی ٹرین کے خانیوال پہنچنے پراٹینڈنٹ کاانتظام کیاگیا۔اسی طرح ٹرین کے فیصل آبادپہنچنے پرلاہورڈویژن کے شعبہ ٹرین لائیٹنگ نے بھی ملتان ڈویژن کی طرح غفلت کامظاہرہ کیااوراے سی اٹینڈنٹ کواے سی بوگیوں کے ساتھ بھجوانے کی بجائے صرف اے سی کے بلورچلا کرٹرین کوواپس ملتان کے لئے روانہ کردیا۔ذرائع کاکہناہے کہ اے سی بوگیوں کے اٹینڈنٹ کی غیرموجودگی میں اگرراستہ میں کہیں بھی معمولی سابھی شارٹ سرکٹ ہوجاتاتوریلوے کوتیزگام کی طرح ایک اورخوفناک حادثہ کاسامناکرناپڑسکتاتھاتاہم ٹرین اللہ تعالیٰ کے آسرے پرباحفاظت واپس ملتان پہنچ گئی۔مسافروں نے اس صورت حال پراحتجاج کرتے ہوئے ریلوے کے اعلیٰ حکام سے ذمہ داران کے خلاف سخت کاروائی کرنے کامطالبہ کیاہے۔

براحال

مزید : ملتان صفحہ آخر