حکومت خونی تہواربسنت کی ہرگز اجازت نہ دے،شبیر صدیقی

  حکومت خونی تہواربسنت کی ہرگز اجازت نہ دے،شبیر صدیقی

  



لاہور (پ ر)تنظیم مشائخ عظام پاکستان کے مرکزی رہنما اور پاکستان مسلم الائنس کے صوبائی صدر صاحبزادہ پیر شبیر احمد صدیقی نے کہاہے کہ حکومت کسی بھی صورت خونی تہوار ”بسنت“ کی ہرگز اجازت نہ دے ان خیالات کااظہار انہوں نے گلشن راوی لاہور میں اہم اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ صاحبزادہ پیر شبیراحمد صدیقی کا کہنا تھاکہ تفریح کے نام پر معصوم شہریوں کی گردنیں کاٹنا کہاں کی دانشمندی اور یفریح ہے، انہوں نے کہاکہ تفریح کرنے کے اور بھی ذرائع ہیں لیکن ایسی تفریح جس سے کسی دوسرے بھائی کے جان و مال کے نقصان کا خطرہ ہو ایسی تفریح سے پرہیز کرنا ہی بہتر ہے۔

تنظیم مشائخ عظام پاکستان کے ضلعی کوارڈینٹر پیر سید احمد ندیم شاہ نے کہاکہ پتنگ سازی پر پابندی کی وجہ سے اس کاروبار سے وابستہ افراد اب دیگر کاروبار یا نوکری سے وابستہ ہوچکے ہیں، وقتی طور پر بسنت کی اجازت دیکر ایک مرتبہ پھر بے روزگاری کا شور شرابا شروع ہوگا۔ لہذا حکومت کو ایسے اقدام جس سے انسانی جانوں کے ضیائع کا خدشہ ہو مکمل طور پر پابندی برقرار رکھنی چاہیے۔ پیر محمد راشد نقشبندی نے کہاکہ اگر اس خونی تہوار کی اجازت دی گئی تو تنظیم مشائخ عظام پاکستان اور لاثانی ویلفیئرفاؤنڈیشن احتجاجی تحریک چلائے گی۔ اجلاس سے، پیر محمد رمضان نقشبندی، پیر محمد عاصم نقشبندی،پیر صباح محمود نقشبندی، پیر حاجی محمد افتخار نقشبندی، پیر سید عدنان اکرم نقشبندی، سکندر بھٹی، فیصل نقشبندی، بشیر احمد نقشبندی، میاں محمد رضوان، چوہدری رانا شاہد،سید انتظار حسین شاہ، شبیر احمد نقشبندی، محمد سرور نقشبندی، سمیت دیگرنے بھی خطاب کیا۔ اختتام پر ملکی سلامتی اور آزادی کشمیر کیلئے دعا بھی کی گئی

مزید : میٹروپولیٹن 1